معتمرین کی صحت اطمینان بخش ہے، ان میں وبائی امراض نہیں پھوٹے: سعودی عرب

صحت کے شعبے سے وابستہ 18 ہزار افراد پر مشتمل عملہ معتمرین اور زائرین کی خدمت پر مامور ہے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کے وزیر صحت فھد بن عبدالرحمن الجلاجل نے کہا ہے عمرہ اور زیارتوں کے لئے مکہ مکرمہ آنے والے معتمرین کی صحت اطمینان بخش ہے۔ ابھی تک ان میں کسی قسم کے وبائی امراض یا عمومی صحت کے لیے نقصان دہ واقعات کا پھیلاؤ دیکھنے میں نہیں آیا۔

فھد بن عبدالرحمن الجلاجل نے یہ بات زور دے کر کہی کہ خادم الحرمین الشریفین اور ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کی ہدایت ہے کہ معتمرین اور زائرین کی صحت اور تحفظ کو یقینی بنانے کے لئے تمام ممکنہ وسائل بروئے کار لائے جائیں۔

انھوں نے بتایا کہ وزارت صحت مکہ مکرمہ میں موجود ہستپالوں اور بنیادی صحت مراکز کے ذریعے متعمرین کے علاج اور انہیں امراض سے بچاؤ کے لئے ضروری اقدامات کر رہے ہیں۔ وزیر صحت کے بہ قول رمضان 1443ھ کے دوران صحت کے لیے تیار کردہ پلان میں حفاظتی اقدامات سمیت متعددی امراض کے پھیلاؤ کو روکنے کی خاطر ضروری ٹیسٹوں کا منظم نظام موجود ہے۔

الجلاجل نے وضاحت کرتے ہوئے بتایا کہ صحت کے شعبے سے وابستہ 18 ہزار اہلکار معتمرین اور زائرین کی کا فریضۃ سرانجام دے رہے ہیں۔ انھوں نے بتایا کہ رمضان المبارک کے پہلے دو عشروں کے دوران 7200 معتمرین کو صحت کے ہنگامی مراکز، مکہ کے ہسپتالوں اور حرم کے ہستپال کے ذریعے صحت اور علاج کی سہولت فراہم کی جا چکی ہے۔ اس وقت تک 36 ہنگامی نوعیت کے آپریشنز، 291 ڈائیلاسسز اور 20 اینجیو پلاسٹیز کی جا چکی ہیں۔

وزیر صحت نے سعودی قیادت اور ان کی نگرانی میں کام کرنے والے مختلف شعبوں میں خدمات انجام دینے والے عملے کے لا محدود تعاون اور وسائل کی فراہمی پر شکریہ ادا کیا جو اس سال عمرہ سیزن کے دوران فراہم کیے جا رہے ہیں۔ انہوں نے دعا کی وہ متعمرین اور زائرین کی عبادات کو شرف قبولیت بخشے تاکہ اللہ کے مہمان مناسک کی ادائی کے بعد بخیریت اپنے ملکوں کو واپس جا سکیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں