سعودی سنٹرل بینک کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کی رکن شیلا الرویلی کون ہیں؟

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

خادم حرمین شریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز آل سعود کی جانب سے سعودی سنٹرل بینک "ساما" کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کے ایسے ممبران کی تقرری کی منظوری دی گئی جو سرکاری ملازم نہیں ہیں۔ ان میں شیلا بنت عذیب الرویلی کی تقرری بھی شامل ہے۔ انہیں بینک کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کے رکن کے طور پر منتخب کیا گیا ہے اور وہ بنک کے بورڈ آف ڈائریکٹر کی پہلی خاتون رکن بھی ہیں۔

شیلا الرویلی سنہ 2019 سے آج تک گارڈین شپ انویسٹمنٹ کمپنی کی ’سی ای او‘ رہی ہیں۔ یہ سعودی پٹرولیم کمپنی ’آرامکو‘ کی ذیلی فرم ہے۔ شیلا الرویلی توانائی کے شعبے میں 25 سب سے زیادہ بااثر خواتین کی ہاٹ انرجی کی فہرست برائے سال 2021 میں شامل تھیں۔

وہ حصانہ انویسٹمنٹ کمپنی سعودی نیشنل بینک اور سعودی آرامکو انویسٹمنٹ مینجمنٹ کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کی رکن ہیں۔

اس سے قبل وہ ’آرامکو‘ میں کئی عہدوں پر فائز رہی ہیں۔سنہ 2018 سے 2019 تک گلوبل اینالائسز ڈیپارٹمنٹ کی ڈائریکٹر کے طور پر خدمات انجام دیں۔ اس سے قبل 2016 اور 2017 کے درمیان ٹریژری ڈیپارٹمنٹ میں فنانشل رسک مینجمنٹ کی ڈائریکٹر کے طور پر کام کر چکی ہیں اور 2008 سے ٹریژری ڈیپارٹمنٹ میں انویسٹمنٹ مینجمنٹ ڈیپارٹمنٹ کی سربراہی کی۔

انھوں نے ’آرامکو‘ میں سنہ 2000 سے سنہ2007 تک کئی دیگرعہدوں پر کام کیا۔ انہوں نے پروجیکٹ فنانس فنانشل اینالسٹ، فارن ایکسچینج فنانشل اینالسٹ اور منی مارکیٹ ٹریڈر کے خزانچی کے عہدے پر فائز ہیں۔

شیلا الرویلی نے سنہ1987 میں شاہ فیصل یونیورسٹی سے داخلہ لیا اور آرکیٹیکچر میں بیچلر کی ڈگری حاصل کی۔ سنہ 1997 میں بیروت کی امریکن یونیورسٹی سے فنانشل مینجمنٹ میں ماسٹرز اور 2018 میں امریکا میں میساچوسٹس ٹیکنالوجی سے ایم بی اے کیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں