خطبہ جمعہ کے لئے مسجد حرام سے صحن مطاف میں منبر کی منتقلی کا عمل 15 منٹ میں مکمل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

صدارت عامہ برائے امور حرمین شریفین میں تکنیکی اور سروسز امور کی جنرل ایڈمنسٹریشن ہر جمعہ کو مسجد حرام میں منبر کو ریکارڈ وقت یعنی صرف پندرہ منٹ میں صحن میں منتقل کرتی ہے۔

منتقلی کے عمل سے قبل خطیب حرم مکی کے منبر کو جراثیم کش اسپرے سے صاف کیا جاتا ہے۔ اس مقصد کے لیے جدید تکنیکی سہولیات استعمال کی جاتی ہیں۔

منبر کی منتقلی کا عمل ایجنسی برائے خدمات، فیلڈ امور اور ماحولیاتی تحفظ کی ذمہ داری ہے۔ یہ ایجنسی مسجد حرام کے اندرونی مقامات اور صحن کو جراثیم سے پاک کرنے، مقدس مقام کو معطر کرنے اور مسجد حرام میں نمازیوں اور زائرین کی صحت کی معیاری سہولیات فراہم کرنے کی ذمہ دار ہے۔

مسجد حرام میں سروسز امور اور تحفظ ماحولیات کے انڈر سیکرٹری محمد بن مصلح الجابر نے مسجد حرام میں نوجوان رضا کاروں اور ماہرین کی ٹیمیں ہمہ وقت موجود رہتی ہیں۔ ان کے ذمہ مسجد حرام کے منبر کی جمعہ کے روز صحن میں منتقلی اور اس سے جراثیم کش اسپرے سے پاک کرنا ہے۔ اس کام پرمامور ٹیمیں نہ صرف منبر حرم مکی بلکہ اس کی الماریوں کی صفائی اور فرش پر بچھائے قالینوں کی صفائی کا بھی معیاری انداز میں کام سرانجام دیتی ہیں۔

الجابری نے کہا کہ خدمات کے امور کی جنرل ایڈمنسٹریشن جمعہ کے لیے دو منبروں کو تیار کرنے کے لیے کام کر رہی ہے، جن میں سے ایک لکڑی کا منبر ہے جو قدرتی بیچ کی لکڑی سے بنا ہے۔ اس میں چار زینے اور ایک نشست ہے۔ اس کی اونچائی 420 سینٹی میٹر اور چوڑائی 157 سینٹی میٹر ہے۔ اس کے اندرونی حصے کی گنجائش 154 سینٹی میٹرہے۔ دوسرا سنگ مرمر کا منبر ہے جو یوگوسلاوین ایلابسٹر سے بنا ہے جس میں 24 برقی بیٹریوں اور امام کے لیے ایک ایئر کنڈیشنر کے ساتھ ریمورٹ کنٹرول سے کنٹرول کرنے کی خصوصیت ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں