.

سعودی عرب کی ڈراونی فلم "کیان" سینما گھروں میں نمائش کے لیے پیش

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب میں تیار ہونے والی ڈراونی فلم ’کیان‘ کو گذشتہ روز سعودی عرب کے سنیما گھروں میں نمائش کے لیے پیش کر دیا گیا جب کہ اس فلم کا ریڈ سی فیسٹیول کے پہلے سیشن میں ورلڈ پریمیئر ہوا اور اس نے سعودی فلم فیسٹیول میں دو ایوارڈز بھی جیتے۔ فلم کی پروڈیوسر ایمن مطہر ہیں۔

اسی وقت ایمن مطہر نے مملکت کے ارد گرد تخلیقی سفر کے اقدام میں حصہ لیا۔ یہ اقدام جنرل انٹرٹینمنٹ اتھارٹی اور MBC اکیڈمی کے درمیان شراکت میں منعقد کیا گیا تھا تاکہ ماہرین اور تخلیق کاروں کے ایک گروپ کے ساتھ خبر شہر میں صلاحیتوں کو تلاش کیا جا سکے۔

ہارر فلم ’کیان‘ کے واقعات ایک سعودی جوڑے کے گرد گھومتے ہیں جو دوستوں سے ملنے جاتے ہیں اور حالات انہیں ایک ہوٹل میں بے چینی اور تناؤ سے بھری رات گزارنے پر مجبور کرتے ہیں۔ وہ اپنے آپ کو ماضی کے بھوتوں کے ساتھ تصادم میں پاتے ہیں۔ اس فلم میں ایمن مطہر نے اور سمر ششہ نے اداکاری کے جوہر دکھائے جب کہ ہدایت کاری حکیم جمعہ کی ہے جو ان کا پہلا طویل افسانوی تجربہ ہے۔

ایمن مطہر ڈینٹسٹ، اداکار، تھیٹر ڈائریکٹراور یوتھ ہب پروگرام کے پیش کنندگان میں سے ایک ہیں جو MBC پر دکھایا جاتا ہے۔

انہوں نے 2010 میں جازان یونیورسٹی کے تھیٹر کلب میں حصہ لے کر اداکاری کی دنیا میں قدم رکھا۔انہوں نے نیشنل یوتھ تھیٹر اور دی ایکٹنگ سینٹر میں کئی ورکشاپس میں شرکت کے لیے بھی سفر کیا۔

انہوں نے 2014 میں فاس انٹرنیشنل تھیٹر فیسٹیول میں ڈرامے Talisman میں شیطان کا کردار پیش کر کے مرکزی اداکار کے طور پر اپنا پہلا ایوارڈ جیتا تھا اور ایک سال بعد انہوں نے گلف تھیٹر فیسٹیول میں اسی کردار کے لیے بہترین لیڈ ایکٹر کا ایوارڈ جیتا تھا۔ 2016 میں پریزنرز آف ٹروتھ کے عنوان سے اپنے پہلے تھیٹر کے کام کی ہدایت کاری کی، جس پر گلف تھیٹر فیسٹیول میں اپنی پیشکش کے دوران بہت سراہا گیا۔

انہوں نے ٹیلی ویژن ڈرامے میں بھی حصہ لے کر سیریز "رشاش" میں قدم رکھا جسے سعودی عرب کی سب سے بڑی پروڈکشن سمجھا جاتا ہے اور یہ ایک سچی کہانی پر مبنی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں