ٹویٹرپرغیرقانونی مواد؛سخت یورپی قوانین کی تعمیل جاری رہے گی:مسک کی یقین دہانی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

ایلون مسک نے یورپی کمیشن کو یقین دہانی کرائی ہے کہ ان کا ملکیتی سوشل میڈیا نیٹ ورک ٹویٹرغیرقانونی آن لائن مواد کی روک تھام کے ضمن میں سخت یورپی قوانین کی تعمیل جاری رکھے گا ۔

گذشتہ ہفتے ایک غیررپورٹ تبادلہ خیال میں،مسک نے یورپی یونین کے صنعت کے سربراہ تھیری بریٹن کو بتایا تھا کہ وہ خطے کے ڈیجیٹل سروسز ایکٹ کی تعمیل کرنے کا ارادہ رکھتے ہیں۔اس ایکٹ کے تحت غیرقانونی موادکوکنٹرول نہ کرنے والی کمپنیوں پر بھاری جرمانے عاید کیے جاسکتے ہیں۔

یورپی یونین کے عہدے داروں نے رائٹرزکو بتایا کہ خود ساختہ آزادیِ اظہار رائے کے مطلق العنان علمبردارایلون مسک نے آیندہ ہفتوں میں فرانس کے سابق وزیرخزانہ بریٹن کے ساتھ بالمشافہہ ملاقات پراتفاق کیا ہے۔

یہ تبادلہ خیال اس وقت ہوا ہے جب بریٹن نے ٹویٹرپر مسک کو جمعہ کے روز نئی یورپی قانون سازی کے بارے میں متنبہ کیا۔انھوں نے ایک ٹویٹ میں کہا کہ ’’یورپ میں یہ پرندہ (ٹویٹر) یورپی یونین کے قوانین کے مطابق ہی پرواز کرے گا‘‘۔

الیکٹرک کاریں بنانے والی کمپنی ٹیسلا انکارپوریٹڈ کے کھرب پتی سی ای او ایلون مسک کی جانب سے یورپی یونین کو یقین دہانیاں ان کےعملی رویہ کی نشان دہی کرتی ہیں حالانکہ انھوں نے اس سے قبل اس خواہش کا اظہار کیا تھا کہ ٹویٹر کے پاس پوسٹ کیے جانے والے مواد پرکم قدغنیں ہوں گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں