موٹرسائیکل پرمملکت کاسفرکرنے والی مہم جو جسے سفر کا شوق اپنے انڈین ہم سفرکے قریب لایا

امل نے سفر سے محبت سے متاثر ہو کر ہندوستانی شہری کی شادی کی پیشکش قبول کر لی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سفر اور سیاحت کی دلدادہ سعودی مہم جو امل احمد، جو اپنے انڈین شوہر شکیل میر کے ساتھ موٹرسائیکل پر سعودی عرب کے مختلف شہروں کا سفر کر چکی ہیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے ساتھ اپنے انٹرویو میں امل نے اس سفر کو اپنے اور اپنے شوہر شکیل کے سیر و سیاحت کے مشترکہ شوق کا حصہ قرار دیا، شکیل نے بھی دنیا کے کئی شہروں کی سیر کی ہے، ان کی جیکٹ ان یادگاری تمغوں سے سجی ہے جس سے سعودی عرب کے اندر اور باہر بہت سی سرگرمیوں میں ان کی اور ان کی اہلیہ کی بھرپور شرکت اور دلچسپی عیاں ہوتی ہے۔

امل احمد نے جازان، ابھا، حائل، ریاض، دمام، الاحساء، جدہ، طائف، جزیرہ فراسان، عسیر اور امارات سمیت متعدد ملکی اور غیر ملکی مقامات کی سیر کی ہے۔

واقفیت کی کہانی

اپنے شوہر کے ساتھ پہلی ملاقات کا ذکر کرتے ہوئے امل کہتی ہیں کہ وہ دونوں ایک تقریب میں ملے تھے اور جب شکیل نے انہیں شادی کی پیشکش کی تو انہوں نے رضامندی ظاہر کردی کیونکہ وہ ان کی شخصیت اور ان کی سفر سے محبت سے متاثر تھیں۔


انہیں لگا کہ وہ ان کے موٹرسائیکل پر سفر کے شوق اور سفر کی سختیوں کو برداشت کرنے کے جذبے کے باعث ان کے لیے بہترین شریک حیات ثابت ہوں گے۔

انہوں نے کہا: میں خوفزدہ نہیں ہوں کیونکہ میرے شوہر موٹر سائیکل چلانے کے لیے ہدایات کے پابند ہیں۔

انہوں نے کہا کہ ہم نے بائیک پر ایک ساتھ خوشگوار لمحات گزارے، اور ہمارا مقصد تھکاوٹ کے باوجود مسکراہٹ پھیلانا ہے۔ ہم ہر مشکل سفر سے واپسی کے بعد خوشی محسوس کرتے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں