انجلینا جولی کےقتل کے لیے منتخب اجرتی قاتل نے کیا حیران کن مطالبہ کیا تھا؟

ڈپریشن کا شکار عالمی شہرت یافتہ ماڈل انجلینا جولی نے نوجوانی میں اپنی زندگی ختم کرنے کا منصوبہ کیسے بنایا اور فیصلہ کیوں تبدیل کیا تھا؟

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
4 منٹس read

بین الاقوامی سٹار انجلینا جولی نے ایک حیران کن اور ناقابل یقین بیان دے کر اپنے مداحوں میں صدمے کی کیفیت طاری کر دی۔ انہوں نےاعتراف کیا ہے کہ نوجوانی کی عمر میں انہوں نے اپنی زندگی ختم کرنے کے لیے ایک کرائے کے قاتل کی خدمات حاصل کی تھیں تاکہ وہ خودکشی کا راستہ اختیار نہ کریں بلکہ کسی دوسرے طریقے سے ان کی موت واقع ہو۔ تاہم اس اجرتی قاتل نے ایک عجیب و غریب درخواست کر کے انہیں حیران کر دیا تھا۔ .

ایک رپورٹ میں 19 سال کی عمر میں فنکارہ انجلینا جولی ڈپریشن کا شکار ہوئی تھیں اور انہوں نے اس حوالے سےچونکا دینے والی تفصیلات کا انکشاف کیا۔ ڈپریشن کی وجہ سے وہ خودکشی کے بارے میں سوچنے لگیں۔ انہوں نے ایک بار ایک انٹرویو میں بتایا کہ وہ اپنی ذہنی صحت کے حوالے سے کشمکش کا شکار تھیں۔’ای وی آئی ای‘ ویب سائٹ کے مطابق انجیلینا جولی نے کہا کہ"میں نے بہت خوشگوار زندگی گذاری لیکن مجھے خاص چیلنجز کا سامنا تھا۔ میں پوسٹ ٹرامیٹک اسٹریس ڈس آرڈر میں مبتلا تھی۔"

سوچنے کی مہلت

انجلینا جن کی دولت 120 ملین ڈالرسے زیادہ ہے نے نوعمری میں خودکشی کی کوشش کی تھی۔ انہوں نے مبینہ طور پر اپنی زندگی ختم کرنے کے لیے ایک پیشہ ور قاتل کی خدمات حاصل کیں، کیونکہ وہ خودکشی کے علاوہ کسی اور طریقے سے اپنی زندگی کا خاتمہ کرنا چاہتی تھیں۔

ٹویٹر پر"ڈیلی لاؤڈ" اکاؤنٹ نے انجلینا جولی کی زندگی کو ختم کرنے کے مقصد سے ایک کرائے کے قاتل کی خدمات حاصل کرنے کی خبر دی اور لکھا کہ اس کا کیا مطلب ہے۔ "انجلینا جولی نے ایک بار مرنے کے لیے ایک پیشہ ور قاتل کی خدمات حاصل کرنے کی کوشش کی، کیونکہ انہیں لگتا تھا کہ کسی کے ہاتھوں قتل ان کے خاندان کے لیے خود کشی کی نسبت زیادہ آسان ہوگا‘‘۔

انجلینا نے پچھلے انٹرویو میں کہا تھا کہ "خودکشی کے ساتھ آپ کے آس پاس کے لوگ قصور وار ٹھہرتے ہیں۔ وہ سوچتے ہیں کہ وہ کچھ کر سکتے تھے، لیکن کسی کے قتل کے ساتھ کوئی بھی اس جرم کی ذمہ داری قبول نہیں کرتا ہے۔"

جولی کا خیال تھا کہ ان کے خاندان کے لیے خودکشی کرنے کے مقابلے میں کسی کے ہاتھوں مارا جانا آسان ہو گا۔انہوں نے اپنے بینک اکاؤنٹ سے کچھ عرصے کے دوران آہستہ آہستہ رقم نکالنے کا مخصوص منصوبہ بنایا تھا تاکہ کسی کو اس پر شک نہ ہو۔

کرائے کا قاتل ایک "مہذب انسان" تھا

تاہم قاتل نے انجلینا جولی کوقتل کرنے سے پہلے دو بار سوچنے کو کہا۔ جولی نے کہا کہ"وہ بہت مہذب شخص تھا اور پوچھا کہ کیا مجھے دو مہینے سوچنے کا وقت مل سکتا ہے۔ وہ دو مہینوں میں دوبارہ فون کر سکتا ہے۔" پھر میری زندگی میں کچھ بدل گیا اور میں نے سوچا کہ میں اس پر قائم رہوں گی۔"

یہ بات قابل ذکر ہے کہ انجلینا اپنی زندگی کے دوران اپنی ذہنی صحت کے حوالے سے طویل کشمکش سے گزری ہیں۔ شہرت اور روشنی نے ان کی نفسیاتی کشمکش کو تقویت بخشی۔ انہوں نے اپنی زندگی کے ایک مخصوص دور میں تناؤ اور دباؤ پر قابو پانے کے لیے منشیات کا بھی سہارا لیا تھا۔

لیکن جولی بعد میں اسے پیچھے چھوڑ کر انسانی مسائل اور ذہنی صحت سے متعلق مصائب کے بارے میں بات کرنے والی سب سے مشہور شخصیات میں سے ایک بن گئیں اور وہ دنیا بھر میں بہت سے لوگوں کے لیے ایک آئیکون اور رول ماڈل ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں