شام کے یتیم بچے ربیع کا خواب پورا، ریاض میں رونالڈو سے ملاقات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
4 منٹس read

چھ فروری کو صبح سویرے جنوبی ترکیہ اور شمالی شام میں آنے والے تباہ کن زلزلے کے دوران والد سے محروم ہوجانے والے شامی بچے ربیع شاہین نے اپنی معصوم باتوں سے دنیا بھر کی توجہ حاصل کرلی تھی۔ اب یہ شامی بچہ اپنی خواہش پوری کرنے کے قابل ہوگیا۔ آخر کار ربیع شاہین ریاض میں اس قابل ہوگیا کہ وہ فٹ بال سٹار رونالڈو کو گلے لگائے۔

سعودی عرب میں انٹرٹینمنٹ اتھارٹی کے سربراہ چانسلر ترکی آل الشیخ نے چھوٹے بچے کی خواہش کو پورا کرنے میں کردار ادا کیا۔ انہوں نے بچے کو پسندیدہ کھلاڑی رونالڈو کو ملانے کے لیے سعودی عرب کا دورہ کرانے کے انتظامات کیے۔

سعودی النصر کے لیے کھیلنے والے پرتگالی بین الاقوامی سٹار کرسٹیانو رونالڈو نے جمعہ کو شامی بچے ربیع شاہین کا استقبال کیا۔ ربیع کے چہرے پر ناقابل بیان خوشی دیکھی جا رہی تھی۔ بچہ بے تابی سے سٹار کھلاڑی کی طرف بھاگا جس نے اسے گلے لگایا ۔ ننھے بچے نے اپنے پسندیدہ سٹار سے ملاقات پر بے پناہ محبت اور خوشی کا اظہار کیا۔ ویڈیو میں ربیع کی آواز سنائی دے رہی ہے کہ میرا خواب پورا ہو گیا ہے۔

ترکی آ ل الشیخ نے ٹویٹر پر ایک ٹویٹ میں اس ملاقات پر تبصرہ کیا اور کہا کہ آپ کی خوشی میرے لیے خوشی کا باعث ہے۔ اللہ تعالی ٰ شاہ سلمان اور شہزادہ محمد بن سلمان کی حفاظت فرمائے جن کی توجہ سے بچے کی خواہش پوری ہوئی۔ اس موقع پر ہم سعودی عوام اور عظیم کھلاڑی کا بھی شکریہ ادا کرتے ہیں۔ خیال رہے ربیع شاہین کی کہانی اماراتی صحافی منذر المزكی کی فلمائی گئی ایک ویڈیو سے شروع ہوئی جو شام اور ترکیہ میں آنے والے تباہ کن زلزلے کے بعد متحدہ عرب امارات کی امدادی مہم کے ایک حصے کے طور پر شام گئے تھے۔

اماات کے صحافی منذر المزكی نے شام میں اس بچے کی ویڈیو بنائی تھی۔ بچے نے ویڈیو میں کہا تھامیں اسٹیڈیم جانا چاہتا ہوں اور اپنی والدہ اور والد کو اپنے ساتھ لے جانا چاہتا ہوں۔ لیکن میرے والد فوت ہو چکے ہیں۔ لیکن میں کرسٹیانو کو دیکھنا چاہتا ہوں۔ المزکی نے ویڈیو کلپ انٹرنیٹ پر شیئر کیا تھا۔ شام سے لیکر سعودی عرب تک یہ ویڈیو سوشل میڈیا کے ذریعے تیزی سے پھیلتی چلی گئی ۔یہاں تک کہ اسے حاصل کرنے والوں کے ہاتھ میں پہنچ گئی جیسا کہ ترکی الشیخ نے اس بچے کے خواب کو پورا کرنے کا اعلان کیا ۔ ترکی آل الشیخ نے اس وقت ٹویٹ کیا اور کہا "اوہ میرے بیٹے، خوش رہو ، آپ کو اور آپکی والدہ کو خوش آمدید ، اے نیک لوگو، مجھے وہاں کون لے جائے گا؟" اس کے بعد سعودی عرب میں انٹرٹینمنٹ اتھارٹی کے سربراہ کو بچے کو ڈھونڈنے میں زیادہ دیر نہیں لگی۔ بچہ درحقیقت گزشتہ ہفتے سعودی عرب پہنچا، وصول کنندگان نے بچے کا پرتپاب استقبال کیا۔ سعودی عرب اترنے کے مقام سے ہی بچے کو وصول کرکے اسے اس کی رہائش گاہ تک لے جایا گیا۔

ترکی الشیخ نے رابطے کے ذرائع پر اپنے اکاؤنٹس کے ذریعے ایک ویڈیو بھی شیئر کی جس میں آل الشیخ نے خاندان کی سرپرستی کا بتایا اور مملکت میں اپنی آمد کے خواب کو شرمندہ تعبیر کرنے کے بعد بچے کی خوشی کو د کھایا گیا۔ سوشل میڈیا پر اس واقعہ کا جشن منایا جارہا ہے۔ بہت سے لوگوں نے رینالڈو سے ملنے سے قبل ہی بچے کی کھیل کود اور مزے کرنے کی ویڈیو پورے مملکت میں پھیلا دی تھی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں