حیران کن منظر: لاکھوں مردہ مچھلیوں سے دریا بند

آسٹریلیا میں پانی میں آکسیجن کی کمی سے تیسرا بڑا واقعہ پیش آیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

آسٹریلیا میں جنوب مشرق کے ایک دور دراز کے علاقے میں مقامی حکام نے بتایا کہ لاکھوں مردہ مچھلیوں نے ایک دریا کو بند کردیا ہے۔ یہ مچھلیاں شدید گرمی کی لہر کی زد میں آکر ہلاک ہوگئی ہیں۔

نیو ساؤتھ ویلز کی ریاستی حکومت نے کہا کہ میننڈی گاؤں کے قریب دریائے ڈارلنگ میں "لاکھوں" مچھلیاں مر گئیں۔ یہ 2018 کے بعد سے اس علاقے میں مچھلیوں کی ہلاکت کا تیسرا بڑا واقعہ ہے۔

سوشل میڈیا پر پوسٹ کی جانے والی ویڈیوز میں تیرتی مچھلیوں کے گھنے گروپوں سے گھری ہوئی کشتیاں دکھائی دے رہی ہیں۔

میننڈی کے ایک رہائشی گریم میک کریب نے ’’اے ایف پی‘‘ کو بتایا کہ یہ منظر "خوفناک" تھا۔ انہوں نے نظر آنے والی مردہ مچھلیوں کی طرف اشارہ کیا اور کہا کہ اس کے خوفناک ماحولیاتی نتائج کا خدشہ ہے۔

مقامی حکومت نے نشاندہی کی کہ حالیہ سیلاب کے بعد دریا میں ہیرنگ اور کارپ مچھلیوں کی تعداد میں نمایاں اضافہ ہوا۔ لیکن پانی واپس چلا گیا اور کم ہوگیا۔ ان مچھلیوں کی موت پانی میں آکسیجن کی کم سطح (ہائپوکسیا) کی وجہ سے ہوئی ہے، جس کے نتیجے میں سیلاب کے پانی میں کمی آئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ گرمی کی لہر اس رجحان کو مزید بڑھا دیتی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں