سات سبزیاں آپ کو سوزش اور بڑھاپے سے بچاتی ہیں

سوزش کی بیماری جوڑوں کے در، دل کی بیماری، ذیابیطس، الزائمر ، بعض اقسام کے کینسر جیسی بیماری کا سبب بن سکتی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
6 منٹس read

سوزش ایک الجھا ہوا موضوع ہو سکتا ہے کیونکہ جسم سوزش کا استعمال اس وقت کرتا ہے جب کسی شخص کو کوئی چوٹ لگتی ہے یا بیماری اپنے آپ کو ٹھیک کر رہی ہوتی ہے۔ تاہم کچھ لوگوں کو دائمی انفیکشن ہو سکتا ہے جو بالکل مختلف چیز ہے۔ سوزش اس وقت دائمی ہو جاتی ہے جب جسم سوزش کے نشانات بھیجنا جاری رکھتا ہے یہاں تک کہ جب کوئی خاص انفیکشن موجود نہ بھی ہو۔ دائمی سوزش کئی عوامل کی وجہ سے ہوسکتی ۔ ان عوامل میں خود کار قوت مدافعت کی خرابی، تناؤ اور تمباکو نوشی شامل ہے۔ وقت گزرنے کے ساتھ دائمی سوزش صحت کی سنگین حالتوں کی طرف لے جاتی ہے۔ یہ گھنٹیا ، دل کی بیماری، ذیابیطس، الزائمر ، یہاں تک کے بعض قسم کے کینسرکا بھی سبب بن سکتی ہے۔

اس قسم کی دائمی سوزش کا عمر بڑھنے کے عمل سے بھی گہرا تعلق ہے۔ جریدے ’’ایجنگ اینڈ ڈیزیز ‘‘ میں شائع ایک رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ سوجن کا علاج نہ کیا جائے تو عمر بڑھنے کا عمل تیز ہو جاتا ہے اور عمر سے متعلق بیماریوں کا خطرہ بڑھ جاتا ہے۔ لہذا سوزش سے لڑنے کا مطلب آہستہ آہستہ عمر بڑھانے میں مدد کرنا بھی ہے۔ دائمی انفیکشن کی روک تھام میں صحت مند غذا کھانا اور سست اور بیٹھے رہنے والے طرز زندگی سے گریز کرنا شامل ہے۔ اگرچہ ہم صرف ایک قسم کا کھانا کھا کر سوجن سے بچ نہیں سکتے لیکن کچھ غذائیت سے بھرپور غذائیں ہیں جو سوزش کے خاتمے میں مدد دیتی ہیں ۔ ان میں 7 سبزیاں اہم ہیں جنہیں اپنی خوراک میں شامل کیا جا سکتا ہے۔

1۔ گاجر

کچی ہو یا پکی، گاجر میں بہت سے غذائی اجزاء ہیں۔ جن میں سے کچھ سوزش سے لڑنے میں مدد کر سکتے ہیں۔ ایک رجسٹرڈ غذائی ماہر ڈاکٹر لارین مینیکر کا کہنا ہے کہ وٹامن اے میں سوزش کے خلاف فائدے سامنے آئے ہیں۔ گاجر جسم میں سوزش اور آکسیڈیٹیو تناؤ کو بھی کم کر سکتی ہے جس سے مدافعتی نظام بھی مضبوط ہو سکتا ہے۔

2۔ مرچ

گھنٹی مرچ ایک ورسٹائل سبزی ہے جسے پکا کر یا کچا کھایا جا سکتا ہے۔ غذائیت کی ماہر اور ’ّ’ ریسیپی فار سروائیول ‘‘ کی مصنفہ ڈانا ہونس کے مطابق یہ بڑھاپے کو کم کرنے کے لیے سوزش پر قابو پانے میں مددگار ثابت ہوتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ گھنٹی مرچ وٹامن سی اور وٹامن اے سے بھرپور ہوتی ہےجو قدرتی اینٹی آکسیڈنٹس ہیں۔ ان میں فائبر بھی زیادہ ہوتا ہے۔ یہ ایک ہائیڈریٹنگ پلانٹ ہے۔ اس میں اینٹی آکسیڈنٹس کی اعلیٰ سطح ہے ۔ اسی کی وجہ سے یہ سوزش کو روکتی ہے۔

3۔ بروکولی

بروکولی ایک غذائیت سے بھرپور سبزی ہے جو دائمی سوزش اور عمر سے متعلق بیماریوں کی شرح کو کم کرنے میں مدد کرتے ہیں۔ ’’کلینیکل نیوٹریشن ‘‘ میں شائع ایک تحقیق میں بتایا گیا کہ بروکولی ،جسے اردو میں ’’ سبز پھول گوبھی ‘‘ بھی کہا جاتا ہے ، سوزش کے علامات کم کرنے کے قابل تھے۔ جیسے سی ری ایکٹو پروٹین یہی کام کرتے ہیں۔

ڈاکٹر ہونس نے کہا کہ بروکولی میں سلفورافین کی مقدار زیادہ ہوتی ہے جو ایک بہت ہی صحت بخش قدرتی اینٹی آکسیڈنٹ ہے اور سوزش کو دور کرتا ہے۔ سبز پھول گوبھی یہ کیلشیم اور فائبر سے بھی بھرپور ہے ۔ اس میں کافی مقدار میں پانی بھی ہوتا ہےجو اس کی سوزش کو روکنے کی صلاحیتوں میں بھی مدد کرتا ہے۔

4۔ آلو

آلو کے بارے میں رائے مختلف ہے کیونکہ یہ کاربوہائیڈریٹس سے بھرپور سبزی ہے لیکن یہ ایک جڑ والی سبزی ہے جو فائدہ مند غذائی اجزا لیے ہوئے ہے ۔ اس لیے آلو بڑھاپے کو کم کرنے میں معاون ہوسکتے ہیں۔ ماہر غذائیت ویرونیکا روسی کہتی ہیں کہ آلو ایک غذائیت سے بھرپور غذا ہے جو فائبر، پوٹاشیم اور وٹامن سی سے بھرپور ہوتی ہے یہ آزاد ریڈیکلز سے لڑ سکتے ہیں۔ یہ جسم میں سوزش، کولیسٹرول اور بلڈ پریشر کو بھی کم کرسکتے ہیں۔ آلو پوٹاشیم سے بھرپور ہوتے ہیں اور سوزش اور درد کو کم کرنے میں مدد کرتے ہیں۔ خاص طور پر جوڑوں کے درد والے افراد کے لیے یہ مفید ہو تے ہیں۔

5۔ پتوں والی سبزیاں

ماہر غذائیت مینڈی ٹائلر کہتی ہیں کہ پتے دار سبز سبزیاں جیسے پالک، واٹر کریس، رومین لیٹش اور سوئس چارڈ میں کئی وٹامنز، معدنیات اور اینٹی آکسیڈنٹس ہیں۔ یہ جسم کو وٹامن اے، سی، ای اور کے فراہم کرتی ہیں۔ سبز پتوں والی سبزیوں میں آئرن، پوٹاشیم، کیلشیم، میگنیشیم اور فائبربھی ہوتے ہیں۔ یہ جسم میں سوزش کو کم کرنے اور مجموعی صحت کو سہارا دینے میں مدد کرتی ہیں۔ ’’ہارورڈ ہیلتھ جرنل ‘‘نے پتوں والے سبزوں کو اینٹی آکسیڈینٹس اور پولی فینول کی اعلی سطح کی وجہ سے سوجن کو روکنے والی مفید غذاؤں میں شمار کیا ہے۔

6۔ لہسن

لہسن مختلف پہلوؤں سے صحت کو فوائد پہنچاتا ہے۔ انہیں فوائد میں سوزش کو کم کرنا بھی شامل ہے۔ ’’جرنل آف میڈیسنل فوڈ ‘‘ کے مطابق لہسن میں سلفر والے مرکبات پائے جاتے ہیں جو سوزش کو روکنے والے فوائد فراہم کرتے ہیں۔

7۔ پیاز

لہسن کے علاوہ، پیاز بھی پسندیدہ کھانوں میں بہت اچھا ذائقہ شامل کر سکتا ہے۔ لیکن اس میں ساتھ ساتھ بہت سے فائدہ مند اینٹی سوزش غذائی اجزاء بھی ہوتے ہیں۔ پیاز پوٹاشیم کا ایک اچھا ذریعہ ہے اور ساتھ ہی ایک اینٹی آکسیڈنٹ ہے ۔اس میں موجود اینٹی آکسیڈنٹ کا نام ’’ کویرسیٹِن‘‘ ہے۔ جریدے ’’نیوٹریئنٹس ‘‘کے مطابق ’’Quercetin ‘‘ قوت مدافعت کے لیے فائدہ مند خصوصیات رکھتا ہے اور سوزش کے نشانات کو کم کر سکتا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں