خوفناک ویڈیو: محلے کے افراد کی انتھک محنت سے چار سالہ بچہ کی زندگی بچ گئی

سات سال کی لڑکی نے کھیل کھیل میں چار سالہ بچے کو پانچ میٹر گہرے کنویں میں پھینک دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

چین میں کھیل کھیل میں ایک سات سالہ بچی نے چار سال کے بچے کو پانچ میٹر گہرے پانی کے کنویں میں پھینک دیا۔ ویڈیو سوشل میڈیا پر پھیلی تو دیکھنے والوں کے رونگھٹے کھڑےہوگئے۔ بچی کے لیے یہ شاد بچپن کے مزے سے زیادہ کچھ بات نہیں تھی کہ اس نے احساس کیے دوسرے بچے کو موت کے شکنجے میں ڈال دیا تھا۔

یہ ویڈیو لوگوں کے لیے ایک مثال بن گئی جو بچوں کو تفریح کے لیے اکیلا چھوڑ دیتے ہیں اور سی سی ٹی وی فوٹیج وغیرہ کو بھی نظر انداز کرتے ہیں۔

فلموں کی طرح چین کے صوبہ یوننان کی ایک کاؤنٹی میں ایک 7 سالہ لڑکی نے 4 سالہ لڑکے کو کنویں میں پھینک دیا۔ لڑکے نے کنویں کے آخری سرے کو پکڑ کر زندگی سے چمٹنے کی کوشش کی تو لڑکی نے اسے 5 میٹر کی گہرائی میں گرنے پر مجبور کردیا۔

بچے کی کم عمری اور کنویں کی گہرائی کی وجہ سے اس کے زندہ بچ جانے کے امکانات نہ ہونے کے برابر تھے تاہم اس کی قسمت میں ابھی زندگی باقی تھی کیونکہ محلے کے لوگوں نے بھرپور کوشش شروع کی اور آخر کا بچے کو زندہ نکالنے میں کامیاب ہوگئے۔

اس دوران لڑکی کے گھر والوں نے لڑکے کے گھر والوں کو رقم فراہم کی تاکہ وہ پولیس میں شکایت درج نہ کرائیں۔ اس واقعہ کی ویڈیو سوشل میڈیا پلیٹ فارمز پر پھیلا دی گئی۔ صارفین نے اس واقعہ کو حیران کن قرار دیا۔ لوگوں نے دونوں بچوں کے خاندانوں کو مورد الزام ٹھہرایا اور کہا کہ یہ کیسے خاندان تھے کہ انہوں نے موقع اور حالات کی سنگینی کو جانے بغیر اپنے بچوں کو اکیلا کھیلنے کے چھوڑ دیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں