منفرد تعمیراتی انداز کی حفاظت کیساتھ مسجد الزبیر بن العوام کی تزئین

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

سعودی عرب میں شہزادہ محمد بن سلمان کا تاریخی مساجد کی بحالی کا منصوبہ جاری ہے۔ اسی منصوبہ کے تحت نجران میں تاریخی مسجد الزبیر بن العوام کو نیا کرکے بحال کردیا گیا ہے۔ مسجد کی تزئین و آرائش کے دوران مسجد کی اصل شکل و صورت اور اس کے منفرد تعمیراتی انداز کی بھی حفاظت کی گئی ہے۔

مسجد الزبیر بن العوام نجران کے علاقے میں تاریخی اماراتی محل کے قریب واقع ہے اور یہ قدیم ترین مساجد میں سے ایک ہے۔ اسے شہزادہ محمد بن سلمان کے تاریخی مساجد کو بحال کرنے کے منصوبے کے دوسرے مرحلے کی مساجد کی فہرست میں شامل کیا گیا تھا۔

منصوبہ کے تحت مسجد کی تزئین و آرائش کی گئی۔ اس کی نئی تعمیر کا کام کیا گیا۔ اس کے بعد اس کی بحالی کی کارروائی کی گئی۔ اس میں ایسا مستند مواد استعمال کیا گیا جس سے یہ مسجد نجران کے علاقے کی طرز پر اپنی اصلیت کے مطابق بحال ہوجائے۔

مسجد ’’الزبیر بن العوام‘‘کی تعمیر 1386 ہجری میں 1436 مربع میٹر کے رقبے پر کی گئی تھی۔ اس میں 1000 نمازیوں کی گنجائش تھی۔ بنیادی طور پر مسجد کی عمارت روایتی طریقے پر بنائی گئی ہے جس میں افقی سمت میں اینٹیں لگائی جاتی ہیں۔ اس کی چھتیں روایتی خصوصیات کے ساتھ ہیں جو کھجور کے درختوں اور بیری کے درختوں کے تنوں اور جھنڈوں سے نکالی گئی لکڑی سے بنائی جاتی ہیں۔

یہ مسجد نجران کے پرانے مقبول بازار کے علاقے میں پہلی مسجد ہے جس کی بنیاد میں قدرتی مواد استعمال کیا گیا ہے۔ اس منصوبہ کے تحت مسجد کی بحالی کے دوران ایک منفرد تعمیراتی انداز کے مطابق اس کی شکل برقرار رکھی جا رہی ہے۔

تاریخی مساجد کی ترقی کے لیے شہزادہ محمد بن سلمان کا منصوبہ تاریخی اقدار کے تحفظ اور الزبیر بن العوام مسجد کے جمالیاتی عناصر کی بحالی کے لیے کام کر رہا ہے۔ مسجد کی تزئین و بحالی میں جدید مواد بھی متعارف کرایا گیا ہے۔ مسجد میں جدید خصوصیات کے ساتھ اس کے ورثے کی خصوصیت کو بحال کیا جائے گا۔ اس کا مینار تیار کیا جائے گا جس میں اندرونی سیڑھیاں اور کھڑکیاں ہوں گی۔ مسجد مقامی تعمیرات کی نمائندگی بھی کرے گی۔ کام کے دوران اس کے مخروطی عمارت کے نظام کو محفوظ رکھا جا رہا ہے ۔ یہ شکل عمارتوں کو موسمی حالات اور ہوا کا مقابلہ کرنے کے قابل بناتی ہے۔

واضح رہے اس منصوبے کے تحت سعودی عرب کے 13 خطوں کی 30 مساجد کو نئی تزئین اور تعمیر کے بعد بحال کیا جارہا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں