" ہم صبح میں آگئے " عرب خلیجی ریاستوں کی خلا سے بنائی گئی ویڈیو

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

اماراتی خلاباز سلطان النیادی نے خلیجی ممالک کے کئی شہروں کے لیے بین الاقوامی خلائی سٹیشن سے ایک ویڈیو کلپ حاصل کیا ہے۔ سلطان النیادی نے اپنے ٹوئٹر اکاؤنٹ پر ویڈیو پوسٹ کی جس میں النیادی کو کیپسول کے اندر دکھایا گیا۔ ان کے بہ قول اس کیپسول میں 7 کھڑکیاں موجود ہیں۔

Advertisement

امارات کا منظر

سلطان النیادی نے ویڈیو میں کہا ہے ’’ اب ہم صبح میں آگئے ہیں۔ ہم اس وقت جزیرہ نمائے عرب میں گھوم رہے ہیں۔ اور دن کے آغاز میں وطن کے نظارے سے زیادہ خوبصورت کوئی چیز نہیں ہے‘‘ اس دوران سلطان النیادی خلا سے خلیجی ممالک کے نظارے کو فلم بنانے کے لیے ترتیب سے کھڑکیاں کھولنے لگتے ہیں۔

سلطان النیادی نے سعودی عرب، پھر عراق، کویت، بحرین، قطر اور امارات میں ریاض کو دکھانے کے لیے کیمرے سے منظر کو قریب کیا۔ انہوں نے دبئی سے گزرتے ہوئے ابو ظبی پر توجہ مرکوز کی۔

بہت تیز

اماراتی خلا باز نے کہا 'چند ہی لمحوں میں ہم نے جزیرہ نما عرب کے گرد تیر کر سفر مکمل کرلیا ہے کیونکہ سٹیشن 27 ہزار کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے گھوم رہا ہے ۔ یہ بہت زبردست رفتار ہے۔

ویڈیو کے آخر میں انہوں نے مزید کہا کہ میں آپ کے ساتھ اس لمحے وطن پر ایک نظردوڑانا چاہتا اور اس کے علاقے اور حیرت انگیز مناظر پر مزید غور سے دیکھنا چاہتا ہوں ۔

واضح رہے اماراتی خلاباز نے 2 مارچ کو امریکی ارب پتی ایلون مسک کی ملکیت والی "سپیس ایکس" کمپنی سے تعلق رکھنے والے ایک راکٹ پر چار خلابازوں کے عملے کے طور پر بین الاقوامی خلائی سٹیشن کے لیے روانہ ہوئے تھے۔

ٹیم مختلف سائنسی تجربات اور تحقیق کرنے کے مشن میں حصہ لے رہی ہے۔ یہ تحقی ایسے جوابات فراہم کرنے میں معاون ہوگی جو سائنسدانوں کو گہرے خلا میں سیاروں پر انسانوں کی تلاش کے سفر پر روانہ ہونے میں مدد کرے گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں