سعودی عرب کی ’’الغرامیل‘‘ چٹانیں منفرد شکلوں کے باعث سیاحوں کی توجہ کا مرکز

’’العلا‘‘ میں واقع چٹانیں فطرت سے محبت کرنے والوں کو خوش کر رہی ہیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

سعودی عرب میں ’’ العلا‘‘ گورنریٹ کے شمال میں "الغرامیل" کے نام سے معروف چٹانیں پھیلی ہوئی ہیں۔ یہ نایاب قدرتی شکلوں والی چٹانیں دیکھنے والوں کو مسحور کردیتی ہیں۔ اپنی کھڑی عمودی شکلوں کے ساتھ، کٹاؤ کے نتیجے میں بننے والے محلات کی طرح کی یہ چٹانیں فنی شاہکاروں کی طرح نظر آتی ہیں۔ درجہ حرارت کے فرق اور ہواؤں اور بارشوں کے عوامل کی باعث یہ چٹانیں ہزاروں سال قبل قدرتی طور پر تشکیل پائی ہیں۔

الغرامیل بھی العلا گورنریٹ میں سیاحوں کے لیے پرکشش مقامات میں سے ایک ہے۔ دنیا بھر سے سیاح یہاں آتے ہیں اور چٹان کے اس کھلے عجائب گھر کے اندر گھومتے ہیں۔ سیاح یہاں پر شہروں کے ہجوم اور روشنی سے دور ہو کر سکون تلاش کرنے، فطرت پر غور کرنے کے لیے پہنچتے ہیں۔ آلودگی سے پاک اس مقام پر تصاویر کھینچی جاتی ہیں اور قدرت کے ماحول سے لطف اندوز ہوا جاتا ہے۔

قدرتی حالات سے بننے والی منفرد شکلوں والی الغرامیل چٹانیں
قدرتی حالات سے بننے والی منفرد شکلوں والی الغرامیل چٹانیں

سعودی پریس ایجنسی کے مطابق الغرامیل کا نام بہت سے ناولوں اور کتابوں میں ذکر کیا گیا ہے۔ ابن منظور کی کتاب لسان العرب میں کہا گیا ہے کہ غرمل یا ’’الغرمول‘‘ بہت بڑے مرد کو کہا جاتا ہے ، اس کا تذکرہ اس پرانے نام سے کتاب "معجم البلدان" میں اس جگہ کیا گیا جہاں یاقوت نے ذکر ہے۔ یہاں کہا گیا کہ ’’الغرامیل‘‘ سرخ سطح مرتفع ہیں۔

سعودی عرب میں العلا میں واقع الغرامیل چٹانیں
سعودی عرب میں العلا میں واقع الغرامیل چٹانیں

سعودی پریس ایجنسی ’’ واپس‘‘ نے الغرامیل کے مختلف نوعیت کے مناظر کے ایک گروپ کو محفوظ کیا ہے۔ اس میں چٹان کی شکلیں، مختلف سائز اور تعداد کو ذکر کیا گیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں