کھجوروں کا سب سے بڑا باغ لگا کر مصر نے گینز بک میں نیا ریکارڈ قائم کر دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

مصر نے حال ہی میں دنیا کے کھجوروں کے سب سے بڑے فارم کے ذریعے "گنیز بک آف ورلڈ ریکارڈز" میں نام درج کرایا ہے، جب کہ ایک سرکاری اہلکار کے مطابق فارم کا سائز "5 گنا" بڑھا دیا جائے گا۔ اس باغ سے غیر معمولی معاشی فوائد حاصل ہوں گے۔

اتوار کے روز "گینز" کے جج کنزی دفراوی نے کہا کہ "مصر نے 132,000مربع کلومیٹر کے رقبے پر دنیا میں کھجور کے سب سے بڑے باغات کا ریکارڈ توڑ دیا ہے۔"

انہوں نے مزید کہا کہ "مصر کو 245,000 کیوبک میٹر کی گنجائش کے ساتھ دنیا میں پانی نکالنے کے سب سے بڑے حوض کو رجسٹر کرنے کا سرٹیفکیٹ دیا گیا تھا۔"

یہ اعلان مصری صدر عبدالفتاح السیسی کی جانب سے نیو وادی میں مشرقی العوینات میں گندم کی کٹائی کے سیزن کے افتتاح کے موقع پر سامنے آیا ہے، جہاں مصر کو عالمی انسائیکلوپیڈیا میں فارم کی رجسٹریشن کی تصدیق کرنے والا سرٹیفکیٹ دیا گیا۔

مصری وزارت زراعت میں سنٹرل ڈیٹ پام ریسرچ لیبارٹری کے ڈائریکٹر عزالدین جاد اللہ نے قاہرہ کے جنوب میں اسوان گورنری میں توشکیٰ پروجیکٹ میں واقع فارم کے بارے میں میڈیا کو بتایا۔

جد اللہ نے مزید کہا کہ "یہ فارم مصر کے 35,000 فدان کے رقبے پر 2.3 ملین کھجور کے درخت لگانے کے منصوبے کا حصہ ہے۔"

"ہم نے پہلے ہی 23,000 فدان کے رقبے پر 1.5 کھجور کے درخت لگانے کا کام مکمل کر لیا ہے۔" "منصوبہ 2018 میں شروع ہوا تھا۔ جو درخت ہم نے لگائے تھے وہ اب پھل دار ہونے لگے ہیں۔

"فارم میں کھجور کی 50 سے زائد اقسام شامل ہیں، ان میں سعودی عرب، متحدہ عرب امارات، امریکا اور دیگر ممالک سے پودے درآمد کیے ہیں۔"

اس میں پائی جانے والی کھجور کی اہم ترین اقسام میں برھی، مجدول، خلاص، سُکری، شیشی، شبیبی، عنبرہ، عجوہ المدینہ، سُکری پیلا، سُکری الاحمر اور صقعی شامل ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں