ایک مشہور کردار کی وجہ سے عالمی سطح پر گلابی پینٹ کی قلت، یہ کہانی کیا ہے؟

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

امریکی ہدایت کار گریٹا گیروِگ کی ہدایت کاری میں بننے والی نئی فلم ’’باربی‘‘ کو سیٹ پر سجاوٹ کی تعمیر کے دوران بڑی مقدار میں گلابی پینٹ کی ضرورت تھی۔ جس کی وجہ سے اس مخصوص رنگ کے شیڈز میں پینٹ کمپنی کی سپلائی کی عالمی قلت پیدا ہوگئی۔

اس حوالے سے گیر وِگ اور فلم کی پروڈکشن ڈیزائنر سارہ گرین ووڈ نے ’’باربی لینڈ‘‘ کی تعمیر کے بارے میں بتایا۔ باربی لینڈ کا انحصار مکمل طور پر گلابی رنگ پر تھا۔ یہ مشہور ’’ڈریم ہاؤس‘‘ کے حقیقت پسندانہ ورژن سے شروع ہوکر سڑکوں سے گزر کر روشنی کے کھمبوں پر ختم ہوتا ہے۔

سارہ گرین نے آرکیٹیکچرل ڈائجسٹ کو بتایا کہ فلم کی وجہ سے گلابی پینٹ کی عالمی قلت پیدا ہوگئی۔ دنیا میں گلابی رنگ ختم ہوگیا۔ انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ چمکدار گلابی رنگ فلم کو ایک جمالیاتی رنگ دیتا ہے۔ میں چاہتی تھی کہ گلابی رنگ بہت چمکدار ہوں۔ میں یہ نہیں بھولنا چاہتی کہ جب میں چھوٹی بچی تھی تو مجھے باربی سے کس چیز کے باعث پیار تھا۔

کمپنی Rosco میں گلوبل مارکیٹنگ کی نائب صدر لورین پراؤڈ نے کہا کہ فلم میں استعمال ہونے والے پینٹ کی تیاری کے لیے ذمہ دار کمپنی نے وضاحت کی کہ فلم میں پینٹ کی تمام مقدار استعمال کر لی گئی۔ انہوں نے بتایا کہ فلم ’’باربی‘‘کی تیاری کورونا وبا کے بعد وسیع تر عالمی سپلائی چین کے مسائل کے ساتھ ساتھ ٹیکساس میں سخت موسم کے دوران ہوئی جس نے پینٹ انڈسٹری میں استعمال ہونے والے مواد کو متاثر کیا۔

لورین پراؤڈ نے بتایا کہ ایک کمی تھی اور ہم نے انہیں وہ سب کچھ دیا جو ہم کر سکتے تھے۔ مجھے نہیں معلوم کہ کیا وہ انشورنس کا دعویٰ کر سکتے ہیں۔ انہوں نے ہمارا پینٹ کا ذخیرہ ختم کر دیا۔

واضح رہے یہ مشہور فلم "وارنر برادرز" نے پروڈیوس کی ہے اور اس میں مارگٹ روبی نے "باربی" اور کینیڈین اداکار ریان گوسلنگ نے "کین" کا کردار ادا کیا ہے۔ یہ فلم 21 جولائی 2023 کو دنیا بھر کے سینما گھروں میں ریلیز کیے جانے کا امکان ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں