مدینہ منورہ کے باغات سیاحتی مقام بننے لگے، کھجور زائرین کا نمایاں ترین تحفہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

مدینہ منورہ میں آنے والے زائرین کے لیے مدینہ کی کھجوریں ہر سال سب سے نمایاں تحفہ بن گئی ہیں۔ اسی بنا پر مقدس شہر کے باغات سیاحتی مقام میں بدل جاتے ہیں۔ العربیہ ڈاٹ نیٹ کی ایک رپورٹ کے مطابق مدینہ منورہ میں کھجور کے تقریباً 17 ہزار فارم ہیں۔ ان فارموں میں ہر سال 2 لاکھ 14 ہزار ٹن کے لگ بھگ کھجور پیدا ہوتی ہے۔ شہر میں آنے والے ضیوف الرحمن کے لیے کھجور سب سے نمایاں تحفہ ہے۔

ہر سعودی عرب آنے والے حجاج کرام مدینہ منورہ میں بھی آتے ہیں اور یہاں سے تحائف خریدتے ہیں۔ حجاج کرام کی تحائف کی فہرست میں سب سے اوپر عجوہ کھجوریں ہیں۔ عجوہ کھجور کے درخت مدینہ منورہ کے تمام باغات میں پھیلے ہوئے ہیں۔

العربیہ چینل نے زائرین کے ان فارمز کی سیر اور شہر کی کھجوروں کے بارے میں ان کے تجربے کے بارے میں ایک ویڈیو رپورٹ دکھائی جس میں بتایا گیا کہ عجوہ کھجوروں کی ان اقسام میں سے ایک ہے جن کے لیے مدینہ منورہ مشہور تھا۔ عجوہ کھجور کا نام مدینہ منورہ کے ساتھ جڑ گیا ہے اور اب اسے "عجوۃ المدینہ" کہا جانے لگا ہے۔ یہ دنیا کی کھجوروں کی بہترین اقسام میں سے ایک ہے اور اس کے بہت سے غذائی فوائد ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں