حسن خاتمہ: مصری بزرگ مسجد کے اندر جمعہ کا خطبہ سنتے ہوئے انتقال کر گئے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

مصر میں ستر کی دہائی کی عمر والے ایک بزرگ قابل رشک انداز میں انتقال کر گئے۔ ان کے موت بہتر انداز میں اس طرح ہوئی کہ وہ مسجد کے اندر جمعہ کا خطبہ سن رہے تھے۔

قاہرہ کے جنوب مغرب میں فیوم گورنری میں ابشوائے مرکز سے منسلک گاؤں کی مسجد بزرگ نے جمعہ کا خطبہ سنتے ہوئے آخری سانس لی۔

77 سال کے احمد عبد الحمید ایک کسان اور گاؤں کے رہنے والے تھے۔ وہ جمعہ کا خطبہ شروع ہونے سے پہلے مسجد میں موجود تھے۔ خطبہ کے دوران وہاں موجود لوگ حیران رہ گئے جب دوران خطبہ ہی وہ اپنے خالق حقیقی سے جا ملے۔

گاؤں کے لوگوں نے کہا کہ احمد عبد الحمید کی طبیعت ٹھیک تھی، ان کا دل مسجدوں سے لگا ہوا تھا۔ وہ ہر نماز کے وقت سے پہلے ہی مسجد پہنچ جاتے، سنتیں ادا کرتے اور جماعت کے ساتھ نماز ادا کرتے تھے۔ وہ فجر کی نماز بھی باقاعدگی سے مسجد میں ادا کرتے تھے۔

مصری اخبار "الوطن" کے مطابق بزرگ کے بھتیجے محمد خالد نے کہا کہ خطبہ جمعہ کے دوران ان کے چچا کی موت سے انہیں حیرت ہوئی۔ خاص طور پر چونکہ وہ کسی بیماری میں مبتلا نہیں تھے اور ان کی صحت ٹھیک تھی۔ وہ صبح سویرے بیدار ہو کر اپنی زرعی زمین پر گئے۔ گھر واپس آئے اور پھر وضو کرکے مسجد گئے تھے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں