ان کریڈیبل انڈیا: ٹماٹروں کی حفاظت سبزی فروشوں نے باؤنسر گارڈز رکھ لئے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

بھارت کی سب سے بڑی ریاست اتر پردیش کے معروف شہر وارانسی (بنارس) میں ایک دکاندار نے اپنے ٹماٹر کی حفاظت کے لیے باؤنسر رکھ لیے ہیں۔ خبر رساں ادارے پی ٹی آئی کی رپورٹ کے مطابق ورانسی کے ایک سبزی فروش اجے فوجی نے اپنی دکان کے ساتھ دو باوردی باؤنسر رکھے ہیں۔

سوشل میڈیا پر وائرل ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ سماج وادی پارٹی کے ایک مقامی لیڈر اجے فوجی کو سبزی فروش اور ٹماٹروں کی حفاظت پر مامور گارڈز کے ساتھ دیکھا جا سکتا ہے۔

سماج وادی پارٹی کے مقامی رہنما اجے فوجی کے اس اقدام کا خمیازہ سبزی فروش کو بھگتنا پڑا اور واراناسی کی مقامی پولیس نے اسے گرفتار کرکے 3 مقدمات میں اس کا نام درج کر لیا ہے۔

ایک دوسری ویڈیو میں سبزی فروش 2 گارڈز کے حصار میں ٹماٹروں سے بھری ٹوکری لاکر اپنی دُکان پر رکھتا ہے جبکہ ایک اور وائرل ویڈیو میں سبزی فروش گاہک کے انتظار میں بیٹھا ہے جبکہ گارڈز دکان کے سامنے پہرا دے رہے ہیں۔ ویڈیو وائرل ہونے کے بعد سبزی فروش کو گرفتار کر لیا گیا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق سبزی فروش کو دفعہ 153A، 295 اور 505(2) کے تحت ایف آئی آر درج کرکے گرفتار کرلیا گیا ہے جبکہ اجے فوجی تاحال فرار ہے۔

یاد رہے کہ اسے پہلے گذشتہ ہفتے میکڈونلڈز نے شمالی اور مشرقی بھارت میں اپنے بیشتر آؤٹ لیٹس پر کھانے کی تیاری میں ٹماٹر کا استعمال بند کر دیا تھا۔ اس کی وجہ ٹماٹر کی قیمتوں میں ہونے والا پانچ گنا اضافہ بتایا گیا کیونکہ خراب موسمی حالات کی بنا پر فصل کی پیداوار متأثر ہوئی ہے۔

پریس ٹرسٹ آف انڈیا کے مطابق، عالمی فاسٹ فوڈ چین نے کہا ہے کہ ٹماٹر کا استعمال بند کر دینے کی وجوہات میں معیاری مصنوعات کی عدم دستیابی اور قیمت میں تیزی سے اضافہ شامل ہیں۔

ذرائع ابلاغ کے مطابق سوشل میڈیا پر وائرل ویڈیو کا مقصد ٹماٹروں کی بڑھتی ہوئی قیمتوں کے خلاف احتجاج ریکارڈ کروانا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں