ننھے بیٹے کو مارنے کے لیے اجرتی قاتل کی خدمات لینے کی کوشش کرنیوالی ماں گرفتار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

میامی کی ایک 18 سالہ خاتون پر الزام ہے کہ اس نے اپنے 3 سالہ بیٹے کو مارنے کے لیے ہٹ مین کی خدمات حاصل کرنے کی کوشش کی ہے۔ خاتون بدھ کو میامی ڈیڈ کاؤنٹی کے جج کے سامنے پیش ہوئی جس کے بعد اسے قتل کی درخواست کرنے اور مواصلاتی ڈیوائس کے غیر قانونی استعمال کے الزام میں گرفتار کیا گیا۔

پولیس نے ایک رپورٹ میں کہا کہ خاتون نے ایک پیروڈی ہٹ فار ہائر ویب سائٹ کا دورہ کیا جس کا مقصد قانون نافذ کرنے والے اداروں کی مدد کرنا تھا۔ خاتون نے یہ اس کوشش میں کیا کہ اس کے بیٹے کو بہت دور لے جایا جائے اور ممکنہ طور پر مار دیا جائے اور وہ اس کام کے لیے 3 ہزار ڈالر ادا کرنے کو تیار ہے۔

پولیس نے کہا کہ اس نے ایک پتہ فراہم کیا جہاں لڑکا اپنی دادی کے ساتھ رہتا ہے۔ ویب سائٹ نے خاتون سے رابطہ کیا تو اس نے اس لڑکے کی ایک حالیہ تصویر اور اس کا فون نمبر فراہم کردیا۔

ویب سائٹ چلانے والے ایک شخص نے میامی ڈیڈ پولیس سے رابطہ کیا اور جاسوسوں نے فراہم کردہ آئی پی ایڈریس اور فون نمبر کا استعمال کرتے ہوئے خاتون کا سراغ لگا لیا۔

جاسوسوں نے لڑکے کی دادی سے بات کی جنہوں نے انہیں بتایا کہ اس کی بیٹی مئی میں باہر چلی گئی تھی۔ اس نے کہا کہ لڑکا اب بھی اس کے ساتھ رہتا ہے۔ دادی نے جاسوسوں کو بتایا کہ اس نے پیر کو لڑکے کی تصویر لیجو ہٹ مین ویب سائٹ پر پوسٹ کی گئی تھی اور اپنی بیٹی کو بھیج دی۔

بچے کی ماں کو منگل کے روز بعد میں اس کے والد کے گھر سے گرفتار کر لیا گیا ۔ گرفتاری کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ اس نے اعتراف جرم کرلیا تاہم جب خبر رساں اداروں کے سامنے اس نے اس کی تردید کردی۔ خاتون نے جج مینڈی گلیزر کو بتایا کہ اس کا کبھی بھی کسی قسم کی ذہنی صحت کی حالت کا علاج نہیں کیا گیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں