اداس اور غمگین، والد سے تنازع کے بعد ترک شیک بوراک پہلی مرتبہ سامنے آگئے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read


ترکیہ کے معروف شیف بوراک اوزدیمیر کے ریسٹورنٹس سے متعلق اپنے کاروبار میں والد سے جھگڑا ہونے اور کاروبار میں ملکیت سے محروم کئے جانے نے رائے عامہ کو چونکا کر رکھ دیا تھا۔ اپنے اس تنازع کے بعد ترک شیف بوراک پہلی مرتبہ عوام کے سامنے آگئے۔ اس جھگڑے کے بعد بوراک نے اپنی پہلی ویڈیو شیئر کی۔

معروف شیف نے ’’انسٹاگرام‘‘ پر اپنے اکاؤنٹ کے ذریعے ویڈیو کلپ شائع کیا۔ اس کلپ میں وہ انتہائی اداس اور بظاہر روتے ہوئے دکھائی دیتے ہیں۔ ان کے پیچھے ایک چشمے کا پانی اچھل رہا جو انہیں بھی بھگو رہا ہے۔ ان کے چہرے پر اداسی اور دل ٹوٹنے کے آثار ظاہر ہیں۔ بوراک نے اپنی اس ویڈیو پر ’’ سب کو شب بخیر‘‘ کا تبصرہ لکھا۔

ان کے اس کلپ کو 8 لاکھ سے زیادہ افراد نے دیکھا اور 12 سے زیادہ تبصرے سامنے آئے۔ ان کے بہت سے مداحوں نے ان کے لیے اپنی حمایت کا اظہار کیا ۔ ان افراد نے مالی بحران کی روشنی میں ان کے ساتھ کھڑے رہنے کا کہا ۔

خفیہ فراڈ

واضح رہے ’’ CZN Burak‘‘ ریسٹورنٹ چین کے مالک بوراک نے اپنے والد کے خلاف مقدمہ دائر کیا تھا۔ انہوں نے بتایا تھا کہ ان کے والد نے اپنے بیٹے کے نام کے ملکیتی حقوق ایک غیر ملکی تاجر کو ان کے علم میں لائے بغیر فروخت کر دیے تھے۔

بین الاقوامی شیف ایک ویڈیو میں اپنے پیروکاروں کو سمجھاتے ہوئے نمودار ہوئے کہ انہوں نے اپنے والد کے خلاف اپنے مشہور ریسٹورنٹ کے بارے میں خفیہ طور پر دھوکہ دہی کے الزام میں مقدمہ دائر کیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ کھانا پکانے کی دنیا میں وہ اپنا سفر اب والد سے الگ ہوکر خود چلائیں گے۔ بوراک نے بتایا کہ میری ملکیت میں اب کوئی بھی ریسٹورنٹ نہیں سوائے استنبول کے ایک ریسٹورنٹ کے۔ یہ ریسٹورنٹ بھی ستمبر میں کھولا جائے گا۔

توقع ہے کہ عدلیہ اگلے ستمبر میں اس معاملے پر سماعت کرے گی۔

مشہور شیف کا اپنے والد سے اختلاف اپنی نوعیت کا کوئی پہلا واقعہ نہیں ہے۔ ترکی میں تباہ کن زلزلے کے بعد بوراک اور ان کے والد کے درمیان بحران پیدا ہو گیا تھا کیونکہ بوراک نے زلزلے سے متاثرہ علاقوں میں زیادہ سے زیادہ مدد فراہم کرنے کی کوشش کی لیکن اسے اپنے والد کی طرف سے رکاوٹوں کا سامنا کرنا پڑا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں