سعودی عرب: جازان میں موٹاپے کاشکار شخص کا کامیاب علاج

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی عرب کے شہر جازان میں واقع شہزادہ محمد بن ناصر اسپتال کی فیکلٹی نے موٹاپے کا شکار ایک 44 سالہ شخص کا کامیابی سے علاج کیا ہے۔ وہ گذشتہ آٹھ ماہ سے موٹاپے کی شدید علامات میں مبتلا تھا۔

مریض اپنے اضافی وزن کی وجہ سے غیر متحرک ہوگیا تھا۔اس کا وزن 320 کلوگرام ہوچکا تھا اور اب علاج کے بعد اس کا وزن 230 کلوگرام کردیا گیا ہے۔

اس مریض کو سمتہ اسپتال کے انتہائی نگہداشت یونٹ سے جازان کے موٹاپا سرجری مرکز منتقل کیا گیا تھا۔اسے سانس لینے میں دشواری کا سامنا تھااوروہ بے خوابی کے عارضے میں مبتلا تھا۔

اس کیس سے وابستہ طبّی ماہرین کا کہنا ہے کہ انھوں نے مریض کے ضروری کلینیکل اور لیبارٹری ٹیسٹ کیے تاکہ چار مراحل پر مشتمل علاج کا منصوبہ تیار کیا جاسکے اور مریض کی نفسیاتی اور جسمانی حالت کو بہتربنایا جاسکے۔مریض کا ڈپریشن کے ساتھ ساتھ دل اور پھیپھڑوں کی بیماریوں کا بھی علاج کیا گیا تھا۔

آستین کی گیسٹریکٹومی کا عمل بغیر کسی پیچیدگی کے کیا گیاجس سے یہ شخص صحت یاب ہوگیا ہے اوراس کو اسپتال سے فارغ کردیا گیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں