شدید گرمی میں ایئر کنڈیشنر کی کارکردگی کو برقرار رکھنے کے 10 نکات

یہ شکایت عام ہے شدید گرمی کی وجہ سے ایئر کنڈیشنر بند ہو جاتے ہیں یا گرم ہوا چھوڑنا شروع کردیتے ہیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
5 منٹس read

آج دنیا میں غیر معمولی ماحول دیکھنے میں آ رہا ہے۔ دنیا بھر میں گرمی اس قدر بڑھ رہی ہے کہ اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل گوتیریس نے کہا کہ گلوبل وارمنگ کا دور ختم ہو گیا ہے اور گلوبل اتھل پتھل شروع ہوگئی ہے۔ اس ماحول میں ایئر کنڈیشنرز بھی بسا اوقات کام رکنا چھوڑ دیتے ہیں۔ جتنا درجہ حرارت زیادہ ہوگا ایئر کنڈیشنر کے لیے کام کرنا اتنا ہی مشکل ہوتا ہے اور اس کی کارکردگی بھی کم ہوتی جاتی ہے۔ اس شدید گرمی میں اے سیز بجلی بھی زیادہ خرچ کرتے ہیں۔ اس کے کام کا معیار الگ کم ہوجاتا ہے۔

یہ مسئلہ بہت سے لوگوں کو پیش آتا ہے جنہوں نے درجہ حرارت میں انتہائی اضافے کی وجہ سے ایئر کنڈیشنر بند ہونے یا گرم ہوا چھوڑنے کی شکایت کی۔

گرمیوں میں بھی ایئر کنڈیشنر کیسے اچھی حالت میں رہیں ۔ آرکیٹیکٹس ڈائری کے مطابق اس کے لیے کچھ تجاویز پیش کی جاتی ہیں۔

فلٹرز کی صفائی

ایئر کنڈیشنگ فلٹرز طویل استعمال کے بعد گندے ہو جاتے ہیں۔ فلٹرز دھول اور گندگی سے بھر سکتے ہیں اور بہت سے مسائل کا باعث بن سکتے ہیں۔ اس مسئلے کی وجہ سے ایئر کنڈیشنر تیز آواز کرے گا اور صحیح مقدار میں ہوا نہیں چھوڑے گا۔ ایسا ہونے سے روکنے کے لیے، ہر 3 ماہ بعد فلٹرز صاف کریں۔ آپ یہ کام خود کر سکتے ہیں یا معمول کی دیکھ بھال کے لیے پیشہ ور افراد سے رابطہ کر سکتے ہیں۔

کمرہ بند رکھیں

اگر آپ کمرے کا دروازہ کھلا چھوڑ دیتے ہیں تو ٹھنڈی ہوا باہر نکل جائے گی اور ایئر کنڈیشنر کمرے میں زیادہ ہوا لانے کے لیے کام کرے گا۔ اگر ایئر کنڈیشنر ٹھنڈی ہوا کے لیے بہت زیادہ کام کر رہا ہے تو یہ زیادہ گرم ہو سکتا ہے اور خراب ہو سکتا ہے۔ اس لیے کمرے کو بند رکھنا چاہیے۔

استعمال میں نہ ہونے پر اے سی بند کردیں

جب آپ کمرے میں نہ ہوں تو ایئر کنڈیشنر کو بند رکھنا بہتر ہے تاکہ اس پر زیادہ کام کا بوجھ نہ آئے۔

کمرے کو سایہ دار بنائیں

کمرے کی کھڑکیاں بند کریں اور پردے کھینچیں تاکہ سورج کی روشنی کمرے میں داخل نہ ہو کیونکہ سورج بالائے بنفشی شعاعیں بھیجتا ہے اور یہ شعاعیں کمرے کو کافی حد تک گرم کر سکتی ہیں۔

اس صورت میں ایئر کنڈیشنر کو ٹھنڈی ہوا کی ایک بڑی مقدار پمپ کرنے کی ضرورت ہوگی اور وہ گرم ہو جائے گا.

چھت کے پنکھے استعمال کریں

ایئر کنڈیشنر کے ساتھ چھت کے پنکھوں کا استعمال توانائی کی بچت اور اپنے کمرے کو ٹھنڈا رکھنے کا ایک مؤثر طریقہ ہے۔ اگر آپ چھت کے پنکھے اور ایئر کنڈیشنر کو ایک ساتھ آن کرتے ہیں تو پنکھا ہوا کو گردش کر کے کمرے کے چاروں طرف پھیلائے گا۔

یقینی بنائیں ایئر کنڈیشنر کے لیے کافی جگہ موجود ہو

ایک وسیع علاقے میں ایئر کنڈیشنر لگانے کے بہت سے فوائد ہیں، کیونکہ یہ پورے کمرے میں ہوا کا بہاؤ آسانی سے کرتا ہے اور بلاک نہیں ہوگا۔ انڈور اور آؤٹ ڈور یونٹس کو ایک کھلی جگہ پرنصب کیا جانا چاہیے۔ اس بات کو یقینی بنائیں کہ وہ جگہ کالموں، دیواروں یا کسی دوسری رکاوٹ سے پاک ہو۔

سمارٹ تھرموسٹیٹ استعمال کریں

ایک سمارٹ تھرموسٹیٹ آپ کے بجلی کے بلوں کو کم کر سکتا ہے کیونکہ یہ آپ کے کمرے کے لیے درکار مناسب درجہ حرارت کو سمجھ سکتا ہے اور اس کے مطابق ایئر کنڈیشنر کو ایڈجسٹ کر سکتا ہے۔

ایئر کنڈیشنر کی کھڑکی کی صفائی

اگر ایئر کنڈیشنگ کی کھڑکی گندگی ہو اور اس پر گردوغبار ہو تو نہ صرف ہوا کے بہاؤ میں رکاوٹ پیدا ہوگی بلکہ گندگی کے ذرات آپ کے کمرے میں بھی خارج ہوں گے۔

بیرونی یونٹ کی صفائی

ایئر کنڈیشنر کا آؤٹ ڈور یونٹ اتنا ہی اہم ہے جتنا انڈور یونٹ۔ اگر آؤٹ ڈور یونٹ کو کسی طرح سے نقصان پہنچے تو انڈور یونٹ موثر طریقے سے کام نہیں کرے گا۔

اس بات کو یقینی بنانے کے لیے کہ ایسا نہ ہو آؤٹ ڈور یونٹ کو ہر وقت صاف رکھیں۔

باقاعدگی سے دیکھ بھال کریں

مندرجہ بالا تمام اقدامات پر عمل کرنے کے بعد بھی ایسے وقت بھی آئیں گے جب ایئر کنڈیشنر خراب ہو جائے گا یا نقصان کے آثار ظاہر ہوں گے۔ اس صورت میں، آپ کو ان نقصانات کی جلد از جلد مرمت کرنے کی ضرورت ہے تاکہ یہ زیادہ دیر تک چل سکے۔

سنسون ویب سائٹ کے مطابق آپ کو ہوا کی عمومی حالت دیکھنے کے لیے ہر چار سے پانچ ماہ بعد دیکھ بھال کی جانچ بھی کرنی چاہیے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں