جاپانی شخص نے ’کتا‘ بننے کے لیے ہزاروں ڈالر خرچ کر دیے: ویڈیو دیکھیے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

پالتو جانوروں خصوصا کتوں سے بہت سے لوگ محبت کرتے ہیں مگر بعض اوقات یہ محبت حد سے بڑھ جاتی ہے، ایسی ہی ایک مثال میں ایک جاپانی شخص نے کتا بننے کے لیے 22 ہزار ڈالر خرچ کر دیے!

شوق کا کوئی مول نہیں اسی کے مصداق ٹوکو نامی جاپانی شخص نے 22,000 ڈالر یا 20 لاکھ جاپانی ین حقیقی کتے کی طرح دکھائی دینے والا ایک کاسٹیوم تیار کروانے کے لیے خرچ کیے ہیں۔

حال ہی میں اپنےاس نئے روپ میں ٹوکو نے اپنے یو ٹیوب اکاؤنٹ پر ایک ویڈیو پوسٹ کی ہے۔ ان کے یوٹیوب پر تقریباً 40 ہزار سبسکرائبرز ہیں اور یہ ویڈیو وائرل ہو گئی۔ ویڈیو میں بعض لوگ انہیں سیر کے لیے لے جارہے ہیں، اس دوران وہ پارک میں موجود دوسرے کتوں کو سونگھتے اور زمین پر لوٹنیاں کھاتے نظر آتے ہیں۔

"راہگیروں اور کتوں کی طرف سے پرتپاک استقبال"

ویڈیو کے مطابق ٹوکو نے گھر باہر نکلنے سے پہلے کہا تھا کہ وہ بیرونی مہم جوئی سے گھبراہٹ اور تھوڑا سا خوفزدہ محسوس کرتے ہیں، لیکن ویڈیو میں دکھایا گیا کہ راہگیروں اور یہاں تک کہ دوسرے کتوں نے بھی ان کا پرتپاک استقبال کیا۔

ٹوکو نے کہا، ’’وہ ایسے کام کرنے میں لطف اندوز ہوتے ہیں جو صرف کتے ہی کرتے ہیں۔‘‘ اس سال فروری میں انہوں نے کتوں کی حقیقی زندگی گزارنے کے لیے ایک پنجرا بھی خریدا ہے۔

یہ ویڈیو 6 دن پہلے پوسٹ ہوئی ہے، مگر گذشتہ سال اس وقت بنی تھی جب ایک جرمن چینل نے ٹوکو سے ملاقات کی۔
تاہم ، لوگ اس شوق کو کس نظر سے دیکھیں اس خوف کے تحت ٹوکو نے اپنی اصلی شناخت ظاہر کرنے سے انکار کر دیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں