سعودی میوزک اتھارٹی کے زیر اہتمام "ہاؤس آف عود" کا آغاز

یہ "بیت العود" انسٹی ٹیوٹ کی ایک سیریز ہے جو کئی عرب ملکوں میں پھیلے ہونہار طلبہ کو تعلیمی مواقع فراہم کرتا ہے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

سعودی میوزک اتھارٹی نے ریاض میں "ہاؤس آف عود" انسٹی ٹیوٹ کا آغاز کردیا۔ ان تمام لوگوں کے لیے دروازے کھولنے کا اعلان کیا جو عود بجانا سیکھنے میں دلچسپی رکھتے ہیں یا انسٹی ٹیوٹ میں رجسٹر ہونے کے لیے عود بنانا سیکھنا چاہتے ہیں۔ اتھارٹی کے مطابق 22 اگست سے 21 ستمبر تک کی مدت کے دوران عود بجانا اور عود بنانے کے تعلیمی اسباق میں شرکت کی جاسکتی ہے۔

یہ انسٹی ٹیوٹ "ہاؤس آف عود" اداروں کی ایک سیریز میں سے ایک ہے جو ایک سے زیادہ عرب ممالک میں پھیلے ہوئے ہیں۔ اسے میوزک اتھارٹی نے عرب ہاؤس آف عود کے تعاون سے قائم کیا تھا۔ اس کی قیادت یونیسکو کے مصور برائے امن نصیر شمع نے کی تھی۔ اسے ہونہار طلبہ کو تعلیمی مواقع فراہم کرنے کے لیے اور اوڈ پلیئرز کی عالمی برادری کی تعمیر میں اپنا حصہ ڈالنے کے لیے شروع کیا گیا تھا۔

انسٹی ٹیوٹ نے اس عرب پروجیکٹ میں موسیقی کے مزید آلات شامل کیے ہیں اور اس کے ساتھ ساتھ عود آلے پر توجہ مرکوز کی ہے تاکہ طالبہ کو ان میں سے کسی ایک کا انتخاب کرنے کی آزادی دی جا سکے۔ میوزک کے روایتی آلات میں عود، قنون، بوزوکی، ساز، وائلن، نی، تال، یا ہاؤس آف عود کے ایجاد کردہ آلات جیسے اوڈلن اور دیگر شامل ہیں۔

ہاؤس آف عود آرٹ اور تخلیقی اظہار کی تلاش میں مدد کرتا ہے۔ میوزک کے طلبہ کے لیے ذاتی میوزک کے انداز کی ترقی کو بھی فروغ دیا جاتاہے۔ عود کا پھیلاؤ اور ہاؤس آف عود کا اثر عرب ثقافت اور اس کی روایتی موسیقی کے پیغام کو بھی ظاہر کر رہا ہے۔

"ہاؤس آف عود ریاض" انسٹی ٹیوٹ انفرادی اور اجتماعی اسباق، ورکشاپس اور لیکچرز فراہم کر رہا ہے جس کا مقصد موسیقی کے علم کو بڑھانا اور عود بجانے کی دنیا میں طلبہ کے افق کو بڑھانا ہے۔

انسٹی ٹیوٹ کا مقصد دنیا کے تمام حصوں میں موسیقی کے بارے میں آگاہی پھیلانا ہے۔ خاص طور پر عود سے متعلق موسیقی اور اس آلے کی اہمیت کو مشرقی عرب موسیقی اور اس کے سکولوں کے ایک لازمی حصے کے طور پر اجاگر کرنا ہے۔

واضح رہے "ہاؤس آف عود ریاض" انسٹی ٹیوٹ کا قیام میوزک اتھارٹی کی کوششوں کے تحت کیا گیا ہے تاکہ علاقائی اور بین الاقوامی میوزیکل کیڈرز کو راغب کیا جا سکے اور بین الاقوامی معیار کا تعلیمی نصاب تیار کیا جا ئے۔ موسیقی کے علم کو آگے بڑھایا جائے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں