سعودی عرب: الباحہ میں آثار قدیمہ کی ڈیڑھ سو باقیات دریافت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی عرب میں ہیریٹیج اتھارٹی نے 2023 کی دوسری ششماہی کے دوران الباحہ علاقے میں ’’المعملہ‘‘ کے مقام پر 150 سے زیادہ آثار قدیمہ کی اشیا دریافت کی ہیں۔ دریافت ہونے والی ان قدیم اشیا میں شیشے کے برتنوں اور مختلف دھاتوں سے بنی باقیات شامل ہیں۔ ان میں اوزار، گرینائٹ پتھروں سے بنی کھڑی دیواروں کی باقیات، ایک آرکیٹیکچرل یونٹ بھی شامل ہے۔ اس یونٹ میں 8 کمرے، 4 گودام، 3 بیسن، 3 اوون اور 5 معاون اشیا بھی ملی ہیں۔

سعودی ورثہ اتھارٹی نے بتایا کہ دریافت شدہ مٹی کے برتنوں کی تعداد 61 ہوگئی ہے۔ ان میں چمکدار ٹکڑے بھی شامل ہیں ۔ دریافت شدہ پتھر کے برتنوں کی تعداد 25 مختلف ٹکڑوں کی صورت میں ہے۔

بیان میں کہا گیا کہ اس جگہ سے دریافت ہونے والے شیشے کے برتن میں 20 کثیر رنگ کے ٹکڑے شامل تھے، ان دریافتوں میں پتھر کے 15 ٹکڑے اور 25 درمیانے درجے کی چکیوں کے ٹکڑے بھی شامل تھے۔ آثار قدیمہ کے 10 دھاتی ٹکڑے بھی ملے ہیں۔ ان اشیا میں قابل ذکر چیزیں سٹیٹائٹ لیمپ، چمکدار مٹی کے برتنوں کے اوپری حصے اور اسلامی تحریروں والے برتن ہیں۔ واضح رہے ’’المعملہ‘‘ کا آثار قدیمہ قدیم کان کنی کے سب سے اہم مقامات میں سے ایک ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں