’’حرم کی حدود میں مسجدوں کے لئے زمین دسیتابی کی خبر بے بنیاد ہے‘‘

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

سعودی عرب میں وزارت اسلامی امور نے کہا ہے کہ مکہ مکرمہ حدود حرم میں مساجد کے لیے مخصوص اراضی کے دستیاب ہونے کی خبر بے بنیاد ہے۔

وزارت اسلامی امور نے توجہ دلائی ہے کہ ان دنوں سوشل میڈیا پر یہ اطلاعات گردش کر رہی ہیں کہ مکہ مکرمہ کی حدود حرم میں مساجد بنوانے کے لیے اجازت یافتہ پلاٹس دستیاب ہیں۔ یہ محض افواہ ہے جس کا حقیقت سے کوئی تعلق نہیں۔

اس ضمن میں وزارت اسلامی امور نے خبردار کیا کہ قسم کی غیر مصدقہ اطلاعات کا تبادلہ ٹھیک نہیں۔ ایسے افراد یا ادارے جن کی کوئی سرکاری حیثیت نہیں ان سے منسوب اس قسم کی اطلاعات پر توجہ نہ دی جائے۔

’’بعض لوگ اور ادارے اس قسم کی خبریں پھیلا کر لوگوں کی دینی عقیدت سے کھیل رہے ہیں اس قسم کے دعوے عطیات جمع کرنے کا کھیل ہیں۔‘‘

وزارت اسلامی امور نے اپیل کی ہے کہ اس قسم کی افواہوں اور من گھڑت دعوؤں کے چکر میں نہ پڑا جائے۔

مقامی شہریوں اور مقیم غیر ملکیوں سے اپیل کی جاتی ہے کہ وہ اس قسم کی افواہیں پھیلانے والوں کے خلاف متعلقہ اداروں کو رپورٹ کریں۔ واضح رہے کی ایسی افواہوں سے مفاد عامہ کو بھاری نقصان پہنچتا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں