رونالڈو اس ہوٹل میں پھر نہ آنا: ننھا ایرانی مداح ملنے سے روکنے پر زاروقطار رو پڑا

اے ایف سی چیمپئنز لیگ میں پرسیپولیس کا مقابلہ کرنے کے لیے پہنچنے والی النصر سعودی عرب کے لیے تہران میں ایک بہت بڑا عوامی استقبال

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

ایران میں لیجنڈری فٹ بالر ڈونالڈو کی آمد کے بعد مداحوں کا سیلاب امڈ آیا جو اپنے محبوب ستارے کی جھلک دیکھنے کے لیے بے تاب تھے۔

حال ہی میں سوشل میڈیا پر گردش کرنے والی ایک ویڈیو میں ایک ایرانی بچے کو اس ہوٹل میں بہت زیادہ روتے ہوئے دکھایا گیا جہاں سعودی النصر کی ٹیم اور اس کے بین الاقوامی اسٹار کرسٹیانو رونالڈو ٹھہرے ہوئے تھے، بچہ کھیلوں کے نشریاتی ادارے سے شکایت کر رہا تھا کہ اسے اپنے پسندیدہ اسٹار رونالڈو کو دیکھنے سے
روکا گیا ہے۔

بچہ اس بات پر غمزدہ تھا کہ اسے اپنے پیارے ستارے کے استقبال کے لیے النصر ریذیڈنس ہوٹل میں داخل ہونے کی اجازت نہیں ملی تھی۔

جب براڈ کاسٹر نے ان سے پوچھا کہ آپ رو کیوں رہے ہیں؟ اس نے بہتے آنسوؤں کے ساتھ جواب دیا: "چونکہ ہم کراج سے آئے تھے، ہمارا گھر وہیں ہے، ہم نے رونالڈو کو دیکھنے کے لیے ہوٹل بک کیا، اب انہوں نے ان تمام بچوں کو رلا دیا، اور پھر بھی وہ ہمیں رونالڈو کو دیکھنے کی اجازت نہیں دیتے۔"

براڈکاسٹر نے جواب دیا: "میرے پیارے، وہ تمہیں جانے نہیں دیں گے..!"

اس پر معصوم بچہ مزید روتے ہوئے کہتا ہے کہ"اب اس ہوٹل کا مالک کون ہے؟ کیا وہ مجھ سے مختلف ہے؟ وہ ایک انسان ہے، اور وہ بھی مجھ جیسا انسان ہے، تو اس میں اور مجھ میں کیا فرق ہے؟"

جب براڈکاسٹر نے اس سے پوچھا، "اگر آپ نے رونالڈو کو دیکھا تو آپ اسے کیا کہیں گے؟"، بچے نے جواب دیا: "میں کہوں گا کہ اس ہوٹل میں کبھی نہ آنا۔"

سعودی النصر کلب کی آمد پر ایرانی شائقین میں زبردست جوش و خروش پایا گیا، جو النصر کلب کے وفد کا ایرانی دارالحکومت تہران پہنچنے پر انتظار کر رہے تھے۔

ایرانی بچوں نے النصر کلب کی شرٹیں پہنی ہوئی تھیں اور کرسٹیانو رونالڈو کی تصاویر اٹھا رکھی تھیں، ٹیم بس کے تہران کی سڑکوں سے گزرنے کا انتظار کر رہے تھے۔

النصر کل اے ایف سی چیمپیئنز لیگ میں اپنا پہلا میچ پرسپولس کی ٹیم کے خلاف کھیلے گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں