سعودی عرب 2034 تک سالانہ 4 لاکھ کاریں تیار کر رہا ہوگا: جیری ٹوڈ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی پبلک انویسٹمنٹ فنڈ میں نیشنل ڈویلپمنٹ ڈیپارٹمنٹ کے سربراہ جیری ٹوڈ نے کہا ہے کہ سعودی عرب 2034 تک سالانہ 400,000 کاریں تیار کرے گا۔ انھوں نے یہ بات فیوچر انویسٹمنٹ انیشیٹو کی سرگرمیوں کے دوران ایک تقریر میں کہی۔

انہوں نے کہا جہاں تک سپلائی چینز کا تعلق ہے، دوسرے اور تیسرے درجے کے سپلائرز اب فیکٹریوں کی خدمت کے لیے انفراسٹرکچر بنا رہے ہیں۔ ہم اسے ایک بہت اہم شعبے کے طور پر دیکھ رہے ہیں۔

سعودی عرب میں ٹائر فیکٹری کے قیام کے لیے سرمایہ کاری فنڈ اور پیریلی کے درمیان معاہدہ ہوا ہے۔ انہوں نے نشاندہی کی کہ عمومی طور پرکاروں اور ایرو سپیس اور دفاع کے شعبوں میں جدید مینوفیکچرنگ کے بارے میں بات کرنا دلچسپ ہے ۔ اس حوالے سے ’’ سامی‘‘ کمپنی بھی اہم ہے۔

انہوں نے کہا ’’ سامی‘‘ کا آغاز 2017 میں ہوا اور آج یہ دنیا میں 79 نمبر پر اہم کھلاڑی کے طور پر موجود ہے۔ اس طرح برازیل کی کمپنی ’’ امبرائر‘‘ کا نمبر 100 ہے۔ اس اس سے آپ کو اندازہ ہوجائے گا کہ انہوں نے کتنی طاقت حاصل کرلی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں