چاول، آلو، اور گندم کی روٹی، سائنسی اعتبار سے کون سی خوراک بہتر ہے؟

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

ایک نئی تحقیق سے یہ بات سامنے آئی ہے کہ تمام کاربوہائیڈریٹ غذائیت کے لحاظ سے برابر نہیں بنتے، آلو کے بجائے چاول کا انتخاب کرنے سے آپ کو قیمتی غذائی اجزاء کی کمی ہو سکتی ہے۔

عام امریکی کھانوں میں غذائی اجزاء کے تفصیلی موازنہ سے پتہ چلتا ہے کہ روٹی اور چاول کے کچھ حصوں کو روزانہ دو بار آلو سے بدلنے سے پوٹاشیم کی سطح میں 21 فیصد، وٹامن سی میں 11 فیصد اور فائبر میں 10 فیصد اضافہ ہو سکتا ہے، جس سے آنتوں کے کینسر کا خطرہ کم ہو سکتا ہے۔ .

نتائج کے بارے میں بات کرتے ہوئےماہر خوراک ڈاکٹر کیتھ ٹی ایوب نے وضاحت کی کہ کاربوہائیڈریٹ قابل تبادلہ نہیں ہوتے ہیں اور ان کے وٹامن اور غذائیت کے پروفائل بالکل مختلف ہوتے ہیں۔

چاول، آلو اور گندم کی روٹی

برطانوی اخبار’ڈیلی میل‘ کے مطابق مطالعے میں ڈاکٹر ایوب اور ان کے ساتھیوں نے درمیانے درجے کے آلو میں پوٹاشیم، وٹامن بی 6 اور سی اور فائبر کی مقدار کا موازنہ سفید چاول اور پوری گندم کی روٹی کے ساتھ کیا۔

 آلو کی ایک پلیٹ
آلو کی ایک پلیٹ

اس کے بعد انہوں نے دو عام کھانوں میں تین مختلف کاربوہائیڈریٹس کے درمیان غذائی اجزاء میں فرق کا حساب لگایا اور کل روزانہ فرق کا اندازہ لگایا۔

غذائی اجزاء میں فرق

چاول اور آلو کی خوراک میں پوٹاشیم اور فائبر کی کمی کے علاوہ محققین نے وٹامن بی 6 میں 17 فیصد کمی بھی نوٹ کی۔ یہ ایک غذائیت ہے جو سور کا گوشت اور پولٹری میں بھی پایا جاتا ہے، جو کہ صحت مند خون کی نالیوں کے لیے ضروری ہے۔

جرنل فرنٹیئرز ان نیوٹریشن میں شائع ہونے والی اس تحقیق میں بتایا گیا ہے کہ ایک درمیانے سائز کے آلو میں تجویز کردہ روزانہ پوٹاشیم کی مقدار کا 15 فیصد ہوتا ہے جب کہ پوری گندم کی روٹی میں صرف 3 فیصد ہوتا ہے۔

وٹامن سی"

ایک درمیانے سائز کے آلو میں وٹامن سی کی تجویز کردہ مقدار کا 30 فی صد ہوتا ہے۔جو شفا یابی کے عمل کے لیے اہم ہے جب کہ پوری گندم کی روٹی میں کوئی نہیں ہوتا ہے۔

مطالعہ کے مصنفین نے مشورہ دیا کہ بہت زیادہ آلو نہ کھائیں بلکہ خوراک میں صرف کچھ نشاستہ دار سبزیاں اور میٹھے آلو کو ضرور شامل کریں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں