تلوار بازی کا ورلڈ کپ، مصری کھلاڑی کا اسرائیلی کو شکست دیکر ہاتھ ملانے سے انکار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

اسرائیلی کھلاڑی ڈینیئل فریڈمین کو تلوار بازی کے عالمی کپ میں مصری حریف نے دو ہری ذلت کا شکار کردیا۔ مصری کھلاڑی نے پہلے تو اسے شکست دی اور پھر اس سے ہاتھ ملانے سے انکار کردیا۔

اس عالمی کپ کو "ایپی فینسنگ" بھی کہا جاتا ہے جو اس وقت سوئٹزرلینڈ میں جاری ہے۔ مصری محمود محسن نے اسرائیلی ڈینیئل فریڈ مین کو صفر کے مقابلے میں 5 سے شکست دی۔ مصری کھلاڑی محمود محسن نے فلسطینی عوام سے اظہار یکجہتی کرتے ہوئے اسرائیلی حریف سے ہاتھ ملانے سے بھی انکار کردیا۔

اسرائیلی کھلاڑی نے اپنے مصری حریف سے ہاتھ ملانے کے لیے ہاتھ بڑھایا لیکن محسن نے ہاتھ ملانے سے انکار کر دیا اور پیٹھ پھیر کر اپنے راستے پر چل پڑے۔ اسرائیلی کھلاڑی میچ ریفری کو شکایت کرتا بھی نظر آیا اور 23 سالہ مصری محمود محسن کے رویہ کے خلاف احتجاج ریکارڈ کرایا۔

مصری آرمڈ فورسز فیڈریشن کے ایک ذریعے نے قومی ٹیم کے کھلاڑی محمود محسن کو سزا کے امکان کے بارے میں بتایا۔ انھوں نے کہا کہ انھیں بین الاقوامی آرمز فیڈریشن کی جانب سے سزا نہیں دی جائے گی کیونکہ فیڈریشن کے کچھ قوانین میں 3 ماہ قبل ترمیم کی گئی تھی ۔ نئے قوانین میں مصافحہ نہ کرنے اور اس کی جگہ تلوار سے مصافحہ کرنے کا امکان بھی شامل ہے۔

انھوں نے کہا کہ محمود محسن نے قانون میں اس نئی ترمیم کا فائدہ اٹھایا اور تلوار دوسرے کھلاڑی کی طرف بڑھا دی جبکہ کھلاڑی نے اپنا ہاتھ بڑھایا تھا۔

ذرائع نے مزید کہا کہ اسرائیلیوں نے ابھی تک کوئی شکایت یا اعتراض درج نہیں کیا ہے۔ اگر وہ شکایت درج کرائیں گے تو مصری اسلحہ یونین محسن کی حمایت کرے گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں