میٹھا اور خوش ذائقہ گرما امریکا میں مہلک مرض پھیلنے کا باعث بن رہا ہے؟

36 امریکی ریاستوں میں ’گرما‘ سالمونیلا پھیلنے کا سبب ہو سکتا ہے، امریکی انسداد امراض مراکز نے وارننگ جاری کر دی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

ریاستہائے متحدہ امریکا میں انسداد امراض کے مراکز (سی ڈی سی) نے ایک سنگین انتباہ جاری کیا ہے جس میں خبردار کیا گیا ہے کہ امریکا کی کئی ریاستوں میں سالمونیلا وائرس پھیلنے کی لہرکا سبب ‘گرما‘ [کینٹالوپ] پھلوں کی کچھ اقسام ہو سکتی ہیں۔ ان اقسام کے پھلوں کو امریکا میں ان 117 مریضوں کے ممکنہ وائرس کا شکار ہونے کا خدشہ ظاہر کیا گیا ہے۔

امریکا میں بیماریوں کے کنٹرول کے مراکز (سی ڈی سی) کی طرف سے جاری کردہ الرٹ کے مطابق اس وباء کو ’گرما‘ کی اقسام سے جوڑا گیا ہے (جسے کینٹالوپس بھی کہا جاتا ہے)۔ ان کی دو اقسام اس وائرس سے ممکنہ طور پر منسلک ہو سکتی ہیں اور ماہرین نے ان دو اقسام کی شناخت کی ہے۔ اس سے قبل اکتوبر اور نومبر کے درمیان کچھ خوردہ دکانوں پر ان پھلوں کو فروخت کے لیے پیش کیا گیا تھا۔

سالمونیلا پھیلنے کی وجہ سے 36 ریاستوں میں 117 افراد اس بیماری سے متاثر ہوئے، جس کی وجہ سے ان میں سے 61 کو علاج کے لیے ہسپتال میں داخل کرایا گیا، جب کہ دو افراد کی موت کی تصدیق ہوئی تھی۔

زیادہ تر امریکی ریاستوں میں اس بیماری کے پھیلنے کی اطلاع ملی ہے اور مینیسوٹا میں اس کے 14 کیسز سامنے آئے جو کسی بھی ریاست میں اب تک سامنے آنے والے سب سے زیادہ کیسز ہیں۔

ایجنسی نے 65 سال سے زیادہ عمر کے لوگوں، پانچ سال سے کم عمر کے بچوں اور کمزور مدافعتی نظام والے افراد پر زور دیا کہ اگر پھل کا ذریعہ معلوم نہ ہو تو مکمل یا پہلے سے کٹے ہوئے کینٹالوپس [گرما] کو کھانے سے گریز کریں۔

سینٹرز فار ڈیزیز کنٹرول (سی ڈی سی) نے خبردار کیا کہ مذکورہ پھل دھونے سے محفوظ نہیں ہو سکتے۔ ساتھ ہی کمپنیوں کو مشورہ دیا کہ وہ سرکلر الرٹ کے ذریعے بتائے گئے گرما کو فروخت یا پیش نہ کریں۔

’سی ڈی سی‘ کا کہنا ہے کہ کیسز کی تعداد میں مزید اضافہ ہو سکتا ہے کیونکہ اس بات کا تعین کرنے میں تین سے شار ہفتے لگ سکتے ہیں کہ آیا کسی شخص کی بیماری کا تعلق سالمونیلا پھیلنے سے ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ بہت سے کیسز کم رپورٹ ہو سکتے ہیں کیونکہ کچھ گھر پر ٹھیک ہو جائیں گے یا ٹیسٹ ہی نہیں کرائیں گے۔

سالمونیلا انفیکشن کی علامات کیا ہیں؟

سالمونیلا انفیکشن کی علامات میں اسہال، متلی، پیٹ میں درد، تیز بخار اور پانی کی کمی شامل ہیں۔

زیادہ ترلوگ بغیرعلاج کے چار سے سات دن کے اندر ٹھیک ہو جاتے ہیں لیکن سنگین صورتوں میں ہسپتال میں داخل ہو کر علاج کرانے کی ضرورت پڑ سکتی ہے۔

کینیڈا کے حکام نے اس سے قبل کینٹالوپ کے اسی برانڈ سے منسلک سالمونیلا پھیلنے کی اطلاع دی تھی۔

پبلک ہیلتھ ایجنسی کینیڈا کے مطابق گذشتہ ہفتے تک ملک میں اس وباء سے منسلک 63 کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں