غزہ: اسرائیلی فوج نے گرفتار فلسطینیوں کی تصاویر جاری کردیں

بیت لاھیا سے گرفتار فلسطینیوں کو برہنہ کرکے بد سلوکی کا نشانہ بنایا گیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

غزہ کی پٹی میں اسرائیلی فوج کی کارروائی جاری ہے۔ جمعرات کو اسرائیل نے غزہ کی پٹی کے شمال میں بیت لاھیا سے متعدد فلسطینیوں کو گرفتار کرلیا اور ان کے ساتھ اپنے توہین آمیز سلوک کی تصاویر بھی جاری کردیں۔

اسرائیلی فوج کی طرف سے شائع تصاویر میں دکھایا گیا ہے کہ بڑی تعداد میں برہنہ فلسطینیوں کو ایک گاڑی میں ڈھیر کر کے نامعلوم منزل کی طرف لے جایا جا رہا ہے۔ ایک ویڈیو کلپ میں وہ لمحہ بھی دکھایا گیا جب بڑی تعداد میں فلسطینیوں کو اس وقت گرفتار کیا گیا۔ فلسطینیوں کو حراست میں لے کر برہنہ کرکے زمین پر بٹھایا گیا ہے۔ فلسطینیوں کے اطراف اسرائیلی فوجی اور ٹینکس موجود ہیں۔ جمعرات کو اسرائیلی ٹینکوں نے شمالی غزہ کی پٹی میں بیت لاھیا میں دس ہزار بے گھر افراد کی رہائش گاہ کو گھیرے میں لے لیا۔

بیت لاھیا میں سنائپرز

مرکزاطلاعات فلسطین نے اطلاع دی ہے کہ اسرائیلی توپ خانے نے سکول کے آس پاس گولے داغے ہیں۔ سنائپر فوجیوں نے بے گھر افراد پر فائرنگ کی جس سے سکول کے اندر ہلاکتیں اور زخمی ہوئے۔ بے گھر افراد نے شمالی غزہ کی پٹی میں بیت لاھیا میں مکانات کی چھتوں پر اسرائیلی سنائپرز کو دیکھا اور اس حوالے سے ایک ویڈیو کلپ بھی جاری کیا۔

بے گھر افراد کا کہنا تھا کہ سکول کے اندر متعدد اموات اور زخمی ہوئے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ زخمیوں کی موت اس لیے ہوئی کہ علاقے میں ایمبولینس نہیں تھی۔ انہوں نے بین الاقوامی اداروں بالخصوص ریڈ کراس سے مداخلت کا مطالبہ بھی کیا۔

بے گھر افراد نے اپنی فوری اپیلوں میں مزید کہا ہے کہ یہاں کھانے پینے کی کوئی چیز نہیں ہے۔ بچے بمباری کی شدت، بھوک اور پیاس سے چیخ رہے ہیں۔

شمالی غزہ کی پٹی میں بیت لاھیا میں گرفتاری فلسطینیوں سے توہین  آمیز سلوک کا منظر
شمالی غزہ کی پٹی میں بیت لاھیا میں گرفتاری فلسطینیوں سے توہین آمیز سلوک کا منظر

اسرائیل اور فلسطینی دھڑوں کے درمیان جنگ تیسرے مہینے میں داخل ہو گئی ہے۔ غزہ میں وزارت صحت نے جمعرات کو اعلان کیا کہ اس تنازعے کے آغاز سے اب تک پٹی میں ہلاکتوں کی مجموعی تعداد 17,177 ہو گئی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں