روبوٹ "نادیہ" پیشہ ور کھلاڑیوں سے بہتر باکسنگ کرنے لگی

"روبوٹ" کی ظاہری شکل کھیلوں کے مستقبل کے متعلق تنازعات پیدا کر رہی، انسانوں پر حملوں میں استعمال کیے جانے کا خدشہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
4 منٹس read

ایک امریکی کمپنی نے ایسا باکسنگ روبوٹ ایجاد کرلیا جس کے متعلق ٹیسٹوں سے معلوم ہوا کہ یہ پیشہ ور کھلاڑیوں کے معیار کے مطابق باکسنگ اور دیگر فائٹنگ گیمز میں حیرت انگیز صلاحیتوں کا حامل ہے۔ اس روبوٹ کی ایجاد نے یہ خدشہ پیدا کردیا ہے کہ ایسے روبوٹ عام انسانوں کو نشانہ بنانے والے حملوں میں استعمال ہو سکتے ہیں۔

مغربی میڈیا نے ایک ویڈیو کلپ شائع کیا جس میں باکسنگ روبوٹ کو دکھایا گیا ہے۔ ویڈیو میں اس روبوٹ نے حیرت انگیز صلاحیتوں کا مظاہرہ کیا ۔ یہ ایک قدرتی انسان کے ساتھ باکسنگ کا مقابلہ کر رہا ہے اور اسے کچھ متاثر کن مکے مار رہا ہے۔ یہ توقع کی جارہی ہے کہ یہ "روبوٹ" روبوٹس کی اگلی نسل ہو گا۔

’’العربیہ ڈاٹ نیٹ‘‘ کی جانب سے دیکھی جانے والی رپورٹ میں برطانوی اخبار ڈیلی میل نے اس روبوٹ کو مرحوم اور مشہور ترین بین الاقوامی باکسر محمد علی کلے سے تشبیہ دیتے ہوئے کہا کہ یہ ان کا کلون ہے۔

اخبار نے مزید کہا کہ ایک چار ٹانگوں والے روبوٹک گول کیپر سے لے کر گوگل کی طرف سے تیار کردہ مصنوعی ذہانت کی مدد سے ٹیبل ٹینس کے چیمپئن تک بہت سے روبوٹس نے پہلے ہی کھیلوں کی دنیا میں طوفان برپا کرنا شروع کر دیا ہے۔ اب ایسا لگتا ہے کہ روبوٹ باکسنگ کی دنیا میں پیشہ ور افراد کا مقابلہ کرنے کی تیاری کر رہے ہیں۔

ڈویلپرز نے روبوٹ کا نام "نادیہ" رکھا ہے اور یہ امریکی کمپنیوں IHMC Robotics اور Boardwalk Robotics کی مشترکہ پروڈکٹ ہے۔ ڈیلی میل کے مطابق ایک ناظر نے تبصرہ کیا کہ اس وقت تک انتظار کریں جب تک کہ مسٹر روبوٹ اپنا دماغ حاصل نہ کر لے اور آپ کو حقیقی طور پر مار ڈالے۔

IHMC نے اپنی ویب سائٹ پر کہا کہ روبوٹ کا نام مشہور جمناسٹ نادیہ کومانیکی سے لیا گیا ہے جو حتمی ڈیزائن کے مقصد کی منظوری کے طور پر لیا گیا ہے۔

روبوٹ کو لچکدار بنانے کے لیے ڈیزائن کیا گیا ہے اور اس کے 29 جوڑ ہیں جو اسے آج تک کسی بھی انسان کی حرکت کی بلند ترین رینج فراہم کرتا ہے۔ شائع ویڈیو میں روبوٹ کی اس حیرت انگیز حد کو باکسنگ کے مظاہرے کے ذریعے دکھایا گیا ہے۔

روبوٹ کو ایک محقق ورچوئل رئیلٹی ہیڈ سیٹ اور کنٹرولرز پہنے ہوئے دور سے کنٹرول کرتا ہے۔ ڈویلپرز کا کہنا ہے کہ یہ مستقبل میں مکمل طور پر خود مختار ہوسکتا ہے۔

بہت سے ناظرین نے روبوٹ کی مہارت پر اپنی حیرت کا اظہار کیا ہے۔ ایک صارف نے تبصرہ کیا کہ بہت اچھا کام، انقلاب شروع ہو گیا ہے۔ دوسرے نے مزید کہا کہ مکمل آزادی کی طرف ایک بہترین پہلا قدم ۔

تیار کرنے والی کمپنی کا کہنا ہے کہ "نادیہ" روبوٹ کا وسیع تر مقصد انتہائی موبائل فلور روبوٹ تیار کرنا ہے جو اندرونی ماحول میں کام کر سکتے ہیں جہاں سیڑھیوں اور ملبے کے لیے روبوٹ کو انسان کی طرح حرکت کرنے کی ضرورت ہوتی ہے۔

اسے تیار کرنے والی تحقیقاتی ٹیم کے مطابق روبوٹ کو کئی شعبوں میں استعمال کیا جا سکتا ہے جن میں فائر فائٹنگ، ڈیزاسٹر رسپانس اور بم ڈسپوزل شامل ہیں۔ محققین نے مزید کہا ہے کہ صلاحیتوں کے صحیح امتزاج کو دیکھتے ہوئے نادیہ ایک انسانی ساتھی کے طور پر کام کرنے کے قابل ہو جائے گی۔ یہ کسی کو نقصان پہنچائے بغیر انسانی وجود کو بڑھانے کی صلاحیت فراہم کرے گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں