محبوبہ کو تکلیف پہنچنے کا انوکھا انتقام، ترک عاشق نے کاروں کی ورکشاپ جلا ڈالی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

ترکیہ میں اپنے محبوبہ کی خاطر ایک نوجوان نے کاروں کی ورکشاپ جلا ڈالی۔ عاشق کی کار کی ٹکر تین افراد کو لگی ۔ تینوں افراد زخمی ہوکر ہسپتال پہنچ گئے۔ بعد میں ترک عاشق کو معلوم ہوا کہ اس نے اپنی کار سے جن افراد کو ٹکر ماری تھی ان میں اس کی محبوبہ بھی شامل تھی۔ نادانستہ طور پر ہی سہی لیکن اپنی کار کی ٹکر سے اپنے محبوب کو تکلیف پہنچانے کا خیال نوجوان کو ستانے لگا۔

عاشق نے محبوبہ کو کو تکلیف پہنچانے والی اپنی کار کو سزا دینے کا فیصلہ کرلیا۔ حادثہ کے بعد ترک نوجوان اپنی کار کو مرمت اور تزئین کے لیے ورکشاپ میں کھڑا کر آیا تھا تاہم اس نے دل کے ہاتھوں مجبور ہوکر ورکشاپ میں جاکر اپنی کار کو آگ لگا دی۔ آگ نے دیگر گاڑیوں کو بھی لپیٹ میں لے لیا۔ ورکشاپ میں کھڑی تمام گاڑیاں جل گئیں۔

ترکیہ کی ورکشاپ ۔ گاڑیاں جلی ہوئی ہیں
ترکیہ کی ورکشاپ ۔ گاڑیاں جلی ہوئی ہیں

ترک نوجوان حیران تھا کہ اس کی محبوبہ ان تین افراد میں سے ایک ہے جن کو اس نے اپنی کار سے ٹکر ماری تھی۔ اس کے لیے محبوبہ کو زخمی کرنے والی کار کے ساتھ رہنا بھی مشکل ہونے لگا۔ حادثہ جمعہ کو پیش آیا تھا۔ اپنی کار سے اس انوکھا انتقام لینے کا یہ فیصلہ ترک عاشق کو 2 ملین ترک لیرا میں پڑا ۔ ورکشاپ میں ہونے والے نقصان کا یہ تخمینہ ڈالروں میں 69 ہزار ڈالر بنتا ہے۔

مقامی میڈیا نے بتایا کہ ترک عاشق کے نام کے پہلے حروف الف اور یا ہیں۔ جس ورکشاپ کو آگ لگائی گئی وہ ریاست اڈانا میں ہے۔

ورکشاپ کے مالک نے کار کے مالک پر الزام لگایا کہ اس نے اپنی محبوبہ کی خاطر کار کو آگ لگائی۔ پولیس نے کار کے مالک ترک نوجوان سےتفتیش شروع کردی۔ مقامی میڈیا کی طرف سے شائع تصاویر میں مینٹیننس ورکشاپ میں کئی کاریں مکمل طور پر جلی ہوئی دکھائی گئیں۔ میڈیا نے بتایا کہ نوجوان کی محبوبہ، اس کی دوست اور بچہ اب تک اڈانا کے ایک ہسپتال میں زیر علاج ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں