دوران تلاوت آیات بھولنے پر مصری قاری چھ ماہ کے لیے معطل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

مصر کے ایک مشہور قاری حافظ محمد حامد السلکاوی کو دوران تلاوت آیات بھولنے کے بعد چھ ماہ کے لیے ریڈیو پر تلاوت کرنے اور غیر ملکی پروگرامات کے لیے تلاوت کی ریکارڈنگ کروانے سے روک دیا گیا ہے۔

مصر میں حفاظ اور قراء سنڈیکیٹ نے مشہور قاری محمد حامد السلکاوی کو معطل کرنے اور غیر ملکی ریڈیو اسٹیشنوں اور قرآنی ریکارڈنگ کی فہرست سے ان کا نام چھ ماہ کے لیے ہٹانے کا فیصلہ کیا ہے۔

یہ واقعہ گذشتہ جمعہ کا ہے، جب مصری ٹیلی ویژن، ریڈیو اور کچھ نجی چینلز نے پورٹ سعید گورنری کے المناخ محلے میں واقع الحسین مسجد سے نماز جمعہ براہ راست نشر کی۔

قومی دن کی تقریبات کے ایک حصے کے طور پر الشیخ محمد حامد السلکاوی نے وزیر اوقاف ڈاکٹر محمد مختار جمعہ ،مفتی جمہوریہ ڈاکٹر شوقی علام اور پورٹ سعید کے گورنر میجر جنرل عادل الغضبان کی موجودگی میں دعائیہ تقریب منعقد کی گئی جس میں قاری سلکاوی نے قرآن کی تلاوت کی۔

تلاوت کے دوران مشہور قاری سے غلطی ہو گئی کیونکہ وہ نادانستہ طور پر تلاوت کے دوران دو آیات بھول گئے اور تنبیہ کے باوجود انہیں دہرانے سے کے بجائے آگے بڑھ گئے۔

قراء سنڈیکیٹ نے تلاوت میں غلطی کرنے والے قاری کو چھ ماہ کی مدت کے لیے معطل کرنے کا فیصلہ کیا اور زور دیا کہ وہ کسی ایسے قاری کو برداشت نہیں کرے گی جس نے کتاب اللہ کی تلاوت میں غلطی کی ہو۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں