گیس اسٹیشن لوٹنے والے شخص نے کولڈ ڈرنک کی بوتل کے پیسے ادا کیے اور فرار ہوگیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

ایک غیر معمولی واقعے میں اسپین میں ایک نوجوان نے اپنے ساتھی کے ساتھ مل کر ایک گیس سٹیشن کو لوٹ لیا مگراس ڈکیتی سے قبل اس نے سافٹ ڈرنکس کی بوتل کے پیسے ادا کیے اور وہاں سے فرار ہوگیا۔

’اے ایف پی‘ کی رپورٹ کے مطابق جمعہ کو ہسپانوی پولیس نے ان کی دونوں ملزمان کی گرفتاری کا اعلان کیا۔

نوجوان جو ابھی نابالغ ہے پر الزام ہے کہ اس نے 2 جنوری کی شام کو اندلس کے شہر ملاگا کے قریب واقع ایک گیس اسٹیشن پر اپنے ایک دوست کے ساتھ جعلی بندوق کا استعمال کرتے ہوئے حملہ کیا۔

"اے ٹی ایم سے پیسے لیے"

پولیس نے ایک بیان میں یہ بھی کہا کہ "خواتین ملازمین کو دھمکانے کے بعد اس نے تقریباً 2,000 یورو مالیت کی اے ٹی ایم مشین سے رقم لے لی"۔ انہوں نے مزید کہا کہ "یہ عجیب بات ہے کہ اس نے سائٹ سے لی گئی کول ڈرنک کی بوتل کےپیسے ادا کیے۔ پھر وہاں سے بھاگ گیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ نوجوان اور اس کے ساتھی، جس پراسے جعلی ہتھیار دینے اور ڈکیتی کے دوران ہدایات فراہم کرنے کا الزام ہے کی شناخت کر لی گئی اور صرف 48 گھنٹے کی تفتیش کے بعد گرفتار کر لیا گیا۔

ان کی گرفتاری کے دوران دو نوجوانوں میں سے ایک نے "بے ساختہ پولیس کو بتایا" کہ وہ چوری کی رقم سے ایک موٹر سائیکل خریدنے کا ارادہ رکھتا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں