نسل در نسل چلنے والے رواج، مراکش میں خواتین کی گھروں میں رمضان کی تیاریاں

مراکش کے لوگ ماہ صیام کے لیے مٹھایاں اور کھانے تیار کرتے، گھروں کی صفائی کی جاتی، روایتی کپڑے خرید کر زیب تن کیے جاتے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
5 منٹس read

مراکش کے لوگ اپنی اقدار اور رسومات کے مطابق رمضان المبارک کی آمد سے کچھ دن پہلے ہی اس کی تیاری شروع کردیتے ہیں۔ ان رسومات کا تعلق لباس اور خوراک کی وراثت، شاہانہ تہذیب اور آرام دہ زندگی گزارنے کی ثقافت سے ہے۔

مراکش کے لوگوں نے مختلف ادوار اور تہذیبوں میں رمضان المبارک کے مہینے کے ساتھ اپنے تعلق کی تجدید کی ہے۔ ایک نسل سے دوسری نسل تک کہانیاں اور رسومات منتقل کی گئی ہیں۔ یہ رسومات مراکش کی پوری تاریخ میں مقبول یادوں میں نقش رہیں۔

مراکش کے باشندے رمضان المبارک کی تیاری میں تخلیقی طور پر "اسلو"، "شباکیہ" اور "مخرقہ" جیسی مٹھائیاں اور کھانے تیار کرتے ہیں۔ اپنے گھروں کی صفائی کرتے ہیں۔ "قفطان اور جلابیہ" جیسے روایتی کپڑے خریدتے ہیں یا انہیں درزی سے سلواتے ہیں۔ ان کاموں سے مقدس مہینے کے لیے اپنے ورثے سے جڑی اقدار کی تکمیل کی جاتی ہے۔

مراکش میں رمضان المبارک کا ایک پکوان
مراکش میں رمضان المبارک کا ایک پکوان

ماں کی وفاداری

لندن کی سب سے مشہور شیف، فوزیہ جباری نے العربیہ ڈاٹ نیٹ کو اپنے بچپن اور رمضان کی رسومات کے لیے اپنے شوق کا راز بتایا اور کہا کہ تفریخ اور خوشی کے ماحول میں رمضان کی تیاری کرنا اور جشن منانا اور پیاروں اور پڑوسیوں کی صحبت مجھے ایک خوبصورت وقت کی یاد دلاتا ہے۔ یہ چیزیں میری یادداشت مٹتی نہیں ہیں۔ مجھے یاد ہے کہ تارکین وطن کے طور پر رہ کر میری کامیابی میری ان وابستگیوں اور ماں کے ہاتھوں سے سیکھے ہوئے مراکشی کھانوں کے باعث ہی ہے۔

فوزیہ جباری نے مسکراتے ہوئے کہا کہ شعبان کے آخری ایام مجھے ہمیشہ یادوں کی تار چھیڑنے والے اس ماحول میں واپس لے آتے ہیں جہاں میں اپنی والدہ کے قدموں کو دیکھتی تھیں۔ لکڑی کی ایک چھوٹی کرسی لے کر میں ان کے ساتھ اس وقت بیٹھتی تھی جب محلے کی عورتیں اور پڑوسی میزوں پر جمع ہوتے تھے۔ .

فوزیہ نے کہا میں نے بھی پڑوسی لڑکیوں کی شادیاں دیکھی ہیں جو ان میزوں پر منگنی کرتی تھیں اور ہم بچے اور جوان عورتیں آٹا گوندھنے، مٹھائیاں بنانے، تلنے، شہد میں ڈالنے، صاف کرنے میں مدد کرتے تھے۔ گھر اور فرنیچر کا بندوبست کیا جاتا تھا۔ خوشی سے بھرا ماحول ہوتا تھا۔ رباط میں خواتین دعائیں کرتی اور درود شریف پڑھتی تھیں۔

خوبصورت اور نفیس لباس

اسی حوالے سے مراکش کے مشہور ترین درزیوں میں سے ایک ماسٹر عبداللہ نے بتایا کہ روایتی لباس جس میں جلباب اور قفطان شامل ہے مراکش کے لوگوں کے درمیان تمام مذہبی مواقع پر اب بھی پہنا جاتا ہے۔ یہ ’’ تمغربيت‘‘ کے حصے کے طور پر ہوتا ہے جس کو چھوڑا نہیں جا سکتا۔

استاد عبداللہ، 50 سالوں سے سلائی کے روایتی ہنر کی مشق کر رہے ہیںاور کئی نسلوں اور سماجی گروپوں کے درمیان زندگی گزار رہے ہیں۔ انہوں نے العربیہ ڈاٹ نیٹ کو بتایا کہ مراکش میں رمضان کے ماحول روایتی لباس پہنا جاتا ہے۔ رمضان المبارک میں قفطان زیادہ مقبول ہے کیونکہ یہ مراکش کے لوگوں کے لیے ناشتے کی میزوں پر مہمانوں کا استقبال کرنے اور روایتی لباس میں مسجد جانے کے لیے خوبصورتی اور نفاست میں سب سے بڑھ کر ہوتا ہے۔

مراکشی شہری رمضان المبارک میں روایتی ملبوسات زیب تن کرتے
مراکشی شہری رمضان المبارک میں روایتی ملبوسات زیب تن کرتے

سردار مہینہ

مراکش کی تاریخ اور تہذیب کے محقق ہشام الاحرش نے بتایا کہ رسم و رواج کی ایک نسل سے دوسری نسل تک منتقلی ہمیشہ تہذیب اور آرام دہ زندگی گزارنے کی ثقافت اور وقت اور جگہ کو عبور کرنے والے بادشاہوں کی زندگیوں سے جڑی ہوئی ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ سے بات کرتے ہوئے الاحرش نے زور دیا کہ مراکش میں رمضان دوسرے ملکوں کے رمضان سے مختلف ہے۔ خاص طور پر رمضان ہمارے لیے انتہائی مقدس ہے اور ہم رمضان کو اپنا سردار کہتے ہیں۔ ہمیشہ سے ہر سال رمضان جشن کی علامت کے طور پر آتا ہے۔ مراکش کے کھانا پکانے اور لباس کے ماہر نے مزید کہا کہ مراکش کی آبادی کا شمار ان چند لوگوں میں ہوتا ہے جن کا رمضان میں لباس اور کھانے سے تعلق ہوتا ہے۔

مراکش میں ماہ صیام کی خاص مٹھایاں
مراکش میں ماہ صیام کی خاص مٹھایاں

خدا کی جانب سفر کا ذریعہ

ہشام الاحرش نے نشاندہی کی کہ رمضان المبارک کے دوران لوگوں کا ورثے کے ساتھ زبردست تعلق جڑ جاتا ہے۔ مراکش میں رمضان کی مٹھائیوں کی تیاری کی جاتی ہے۔ ان چیزوں کا رمضان کی روحانی تیاری سے تعلق ہوتا ہے۔ مسافروں کے لیے کھانے کی فراہمی کی جاتی ہے تا کہ وہ عبادت سے غافل نہ ہوں۔

مراکش کے لوگوں کا تعلق رمضان المبارک کے لباس سے بھی شدید ہے۔ یہ مذہبی لباس ہے۔ مسجد ایک عوامی جگہ سمجھی جاتی ہے، ہر محلے میں ایک مسجد ہے۔ مساجد میں نماز تراویح، اعتکاف اور نیکی کے دروس کا اہتمام ہوتا ہے۔ اس طرح رمضان المبارک خدا کی جانب سفر کا ذریعہ بن جاتا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں