کچھ مہاسوں کےعلاج میں کینسر پیدا کرنے والا کیمیکل بینزین پایا جاتا ہے:امریکی لیبارٹری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

بدھ کے روز آزاد امریکی لیبارٹری ویلیشیور نے کہا کہ بعض کمپنیوں کے مہاسوں کے کچھ علاج میں کینسر پیدا کرنے والے کیمیکل بینزین کی اعلیٰ سطحوں کا انکشاف ہوا ہے جن میں ایسٹی لاڈرز کلینیک اور ٹارگٹ کا اپ اینڈ اپ شامل ہیں۔

کنیکٹی کٹ میں قائم لیب نیو ہیون نے بھی امریکی فوڈ اینڈ ڈرگ ایڈمنسٹریشن کے پاس ایک درخواست دائر کی ہے جس میں ریگولیٹر سے مصنوعات کو واپس منگوانے، تحقیقات کرنے اور صنعت کی رہنمائی پر نظرِ ثانی کرنے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔

ویلیشیور نے کہا، نسخے اور کاؤنٹر پر موجود مہاسوں کے علاج کی بینزول پرآکسائیڈ مصنوعات دونوں میں بینزین "ناقابلِ قبول حد تک اعلیٰ سطح" پر بن سکتا ہے جو پہلے ہی بعض سن اسکرین اور خشک شیمپو میں پایا گیا ہے۔

اس رپورٹ کے بعد ایسٹی لاؤڈر کے حصص میں 3 فیصد کمی واقع ہوئی۔

ٹارگٹ اور ایسٹی لاؤڈر نے تبصرہ کے لیے رائٹرز کی درخواستوں کا جواب نہیں دیا۔

ویلیشیور نے کہا، بینزین کی اعلیٰ سطح نہ صرف مہاسوں کی جانچ کردہ مصنوعات میں بلکہ انکیوبیٹڈ مصنوعات کے ارد گرد کی ہوا میں بھی پائی گئی جس سے یہ ظاہر ہوتا ہے کہ کینسر پیدا کرنے والا کارسنجن کچھ پیکجوں سے خارج ہو سکتا ہے جس کے سانس کے ذریعے جسم میں داخل ہونے کا ایک ممکنہ خطرہ ہوتا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں