مسجد حرام میں رمضان المبارک کے منصوبوں پر عمل شروع کردیا گیا: انتظامیہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

مسجد حرام اور مسجد نبوی کی دیکھ بھال کی جنرل اتھارٹی کے سرکاری ترجمان انجینئر ماھر بن منسی الزہرانی نے کہا ہے کہ اتھارٹی نے رمضان المبارک میں مسجد حرام کے اندر زائرین اور نمازیوں کے استقبال کے لیے تیار کیے گئے اپنے آپریشنل منصوبوں پر عمل درآمد شروع کر دیا ہے۔

انتظامیہ نے وضاحت کی کہ المسجد الحرام کو نئے قالین فراہم کیے گئے ہیں۔ مسجد کے ہالز اور صحنوں میں 25,000 سے زیادہ قالین بچھائے گئے ہیں۔ مسجد حرام میں 50 وضو کی جگہیں اور صحنوں میں 3,000 بیت الخلاء بھی ہیں۔ اتھارٹی نے 15000 زمزم کے برتن فراہم کئے ہیں اور پرانے گھر میں 150 مشروبیاں تقسیم کی گئیں۔

انجینئر ماھر نے نشاندہی کی کہ المسجد الحرام کو دن میں 10 بار دھویا اور جراثیم سے پاک کیا جا رہا ہے۔ حرم کی مسجد کے اندر کارکنوں کی تعداد 4000 کارکنوں تک پہنچ گئی ہے۔ 400 سپروائزرز کام کی نگرانی کر رہے ہیں۔ 24 گھنٹے جدید آلات اور مشینیں استعمال کی جاتی ہیں۔ مسجد میں ماحولیاتی تحفظ کو یقینی بنانے کے لیے 4 ہزار مشینیں ہیں۔ نمازیوں اور زائرین کے لیے صحت اور حفاظت کو یقینی بنایا گیا ہے اور تقریباً 3,000 لیٹر ماحول کو معطر کرنے والے خوشبودار مائع استعمال کیا جارہا ہے۔ 1,000 مختلف رنگوں کے پلاسٹک واکرز کا انتظام کیا گیا ہے جو مسجد کے داخلی اور خارجی راستے سے زائرین کی آمد و رفت کو آسان بنا رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ زائرین کے تجربے کو بہتر بنانا ان کے شعور کو بڑھانا اتھارٹی کے اہم مقاصد میں سے ایک ہے۔ انتظامیہ مسجد حرام کی لائبریری میں والی نمائشوں کا انعقاد کرتی رہے۔ کسوہ کمپلیکس کا دورہ صبح 10 بجے سے شام 5 بجے اور شام 4 بجے سے 11 بجے تک کیا جاسکتا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں