سعودی ولی عہد سے سپین کے وزیر اعظم کی ملاقات، تعاون کے امکانات کا جائزہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی ولی عہد و وزیراعظم شہزادہ محمد بن سلمان سے منگل کو جدہ میں سپین کے وزیر اعظم پیڈرو سانچیز نے ملاقات کی ہے۔

سرکاری خبر رساں ایجنسی ایس پی اے کے مطابق ملاقات کے لیے السلام پیلس پہنچنے پر سپین کے وزیر اعظم کا سرکاری خیر مقدم کیا گیا۔

بعد ازاں سعودی ولی عہد اور ہسپانوی وزیر اعظم نے باضابطہ مذاکرات کیے۔

تفصیلات کے مطابق سعودی ولی عہد اور سپین کے وزیراعظم نے دونوں ملکوں کے باہمی تعلقات کے ساتھ علاقائی اور بین الاقوامی پیش رفت پر تبادلہ خیال کیا۔

بات چیت غزہ کی پٹی اور اس کے گرد ونواح کے واقعات، غزہ میں اسرائیل کی فوجی کارروائیوں کو روکنے، عالمی اور انسانی قوانین کی پاسداری کو یقینی بنانے کے لیے بین الاقوامی کوششوں پر مرکوز رہی۔

دونوں رہنماوں نے اسرائیلی جارحیت کے سکیورٹی اور انسانی اثرات سے نمٹنے کے طریقوں، سلامتی کونسل اور اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کی حالیہ قراردادوں کے مطابق امن عمل کو آگے بڑھانے کے بارے میں تبادلہ خیال کیا۔

انہوں نے عرب امن اقدام پر عملدرآمد کی ضرورت پر زور دیا جس کا مقصد بحران کا ایک منصفانہ اور جامع حل تلاش کرنا اور 1967 کی سرحدوں پر مبنی ایک آزاد فلسطینی ریاست کا قیام ہے جس کا دارالحکومت مشرقی یروشلم ہو۔

اس موقع پر وزیر خارجہ شہزادہ فیصل بن فرحان، وزیر دفاع شہزادہ خالد بن سلمان، وزیر توانائی شہزادہ عبدالعزیز بن سلمان، وزیر سپورٹس شہزادہ عبدالعزیز بن ترکی سمیت کئی وزرا اور سپین کے اعلی عہدیدار موجود تھے۔

قبل ازیں وزیر اعظم پیڈرو سانچیز منگل کو سرکاری دورے پر سعودی عرب پہنچے تو جدہ کے کنگ عبدالعزیز انٹرنیشنل ایئرپورٹ پر مکہ ریجن کے نائب گورنر سعود بن مشعل بن عبدالعزیز نے ان کا خیر مقدم کیا۔

سعودی وزیر اقتصاد فیصل بن فاضل الابراہیم، سپین میں سعودی عرب کی سفیر امیرہ ھیفا بنت عبدالعزیز بن عیاف، جدہ کے میئر، مکہ ریجن کے ڈائریکٹر پولیس اور دیگر عہدایدار بھی موجود تھے۔

یاد رہے پیڈرو سانچیز مشرق وسطی کے دورے کے پہلے مرحلے میں سعودی عرب پہنچے ہیں، وہ قطر اور اردن بھی جائیں گے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں