شامی موٹر سائیکل سوار رمضان کے دوران ضرورت مندوں میں کھانا تقسیم کرتے ہوئے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

غروب آفتاب سے چند منٹ پہلے رمضان کے مہینے میں ہر روز موٹر سائیکلوں کا ایک دستہ دمشق کی سڑکوں سے غریب علاقوں کی طرف نکلتا ہے، جس کا مقصد غربا میں مفت کھانا تقسیم کرنا ہے۔موٹرسائیکل سوار ماہ صیام میں ضرورت مندوں کی خدمت کا ایک منفرد ماڈل پیش کرتےہوئے دقیانوسی تصور کوتبدیل کررہےہیں۔

"سیرین ہوپ سائیکلسٹ" ٹیم کے رہ نما طارق عبید نے کہا کہ ہم انتہائی ضرورت مند محلوں میں سائیکلوں کے داخل ہونے اور گھروں اور خاندانوں میں کھانا تقسیم کرنے کی کارروائیوں کی نگرانی کرتے ہیں۔

باون ساہ عبید کا کہنا ہے کہ ’’ہم غریب ترین جگہوں کو ہدف بناتے ہیں اور لوگ ہمیں جان چکے ہیں، ہمیں دیکھ کر مسکراتے ہیں اور ہم سے پیار کرتے ہیں‘‘۔

انہوں نے مزید کہا کہ "ہم موٹر سائیکل سواری کے کھیل کو انسانی اور اخلاقی کاموں میں استعمال کرنے کی کوشش کرتے ہیں"۔

ہر روز سبزیاں کاٹنے، چاول دھونے، اور گوشت پکانے کے بعد ایسوسی ایشنز کھانا تیار کرتی ہے جس کے بعد کھانوں کوڈبوں میں پیک کرکے موٹرسائیکلوں کے ذریعے ضرورت مندوں تک پہنچایا جاتا ہے۔

عبید بتاتے ہیں کہ "لوگ موٹرسائیکلوں کو دیکھتے ہی ان سے دور رہتے تھے لیکن آج جب وہ ہماری نیلی یونیفارم دیکھتے ہیں یا ہماری گاڑیوں کی آوازیں سنتے ہیں تو وہ ہم سے خوش ہوتے ہیں اور مسکراتے ہیں"۔

اس ٹیم جس میں عیسائی اور مسلمان ممبران شامل ہیںکی کوئی سیاسی یا مذہبی وابستگی نہیں ہے۔ اس نے اپنی سرگرمیاں CoVID-19 کے پھیلاؤ کے دوران شروع کی تھیں۔

اس عرصے کے دوران سواروں نے آکسیجن سلنڈر ضرورت مندوں تک پہنچایا جنہیں ان کی ضرورت تھی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں