عمرہ سکیورٹی فورسز کا 27 ویں شب مسجد حرام میں زائرین کو کنٹرول کرنے کا کامیاب پلان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

رمضان المبارک کے آخری عشرے کے دوران عمرہ زائرین کی بڑی تعداد کے پیش نظر حرم مکی میں سکیورٹی کے فول پروف انتظامات کیے گئے ہیں تاکہ زائرین اور معتمرین کو آسانی اور سہولت کے ساتھ پرامن ماحول میں مناسک اور عبادات کی ادائیگی کا موقع فراہم کیا جا سکے۔

عمرہ سکیورٹی فورسز نے رمضان المبارک کی 27 ویں شب مسجد حرام میں زائرین اور معتمرین کو کنٹرول کرنے لیے خصوصی سکیورٹی پلان تیار کیا تھا۔

پبلک سکیورٹی کے ڈائریکٹر لیفٹیننٹ جنرل محمد البسامی نے 27 رمضان المبارک کی رات کو عمرہ سکیورٹی فورسز کے خصوصی عبادت گزاروں اور زائرین کو کنٹرول کرنے کے منصوبے کی کامیابی کا اعلان کیا۔ رمضان کی ستائیسویں شب کے لیے تیار کردہ سکیورٹی پلان کامیاب رہا۔ عمرہ سکیورٹی سروس کو مسجد حرام میں کام کرنے والے دوسرے اداروں بالخصوص پبلک ٹرانسپورٹ کا تعاون حاصل رہا۔

عمرہ سکیورٹی فورسز کے سرکاری ترجمان، لیفٹیننٹ کرنل خالد الکریدیس نے اس سے قبل العربیہ ڈاٹ نیٹ کو بتایا تھا کہ عمرہ سکیورٹی فورسز کی ذمہ داریاں میں زائرین کے سفر کی ترتیب کے مطابق مختلف ہوتی ہیں۔ نمازی ان کے سکیورٹی کنٹرول سینٹرز کے ذریعے مقدس دارالحکومت کی بندرگاہوں تک آمد اور پارکنگ لاٹوں کے ذریعے جڑے ہوئے ہیں۔ عمرہ زائرین اور نمازیوں کو مرکزی علاقے اور مسجد الحرام تک لے جانے کے لیے مخصوص ٹرانسپورٹ بسوں کے لیے روانگی کے اسٹیشنز پبلک ٹرانسپورٹ اتھارٹی کے ساتھ مل کر کام کرتے ہیں۔

جنرل ٹریفک ڈپارٹمنٹ نے ’العربیہ ڈاٹ نیٹ‘ کے ساتھ ایک خصوصی انٹرویو میں کہا کہ اس نے عمرہ زائرین کو بیت اللہ کی زیارت کے لیے آنے والے پانچ پارکنگ لاٹوں سے موصول کرنا شروع کر دیا ہے جو کہ حرم مکی کے داخلی راستوں پر واقع ہیں۔ ان میں شہزادہ محمد بن سلمان روڈ پر شومیسی پارکنگ لاٹ، مدینہ روڈ پر النوریہ پارکنگ لاٹ، الشرائع، طائف السیل روڈ، الہدیٰ روڈ اسٹاپ اور لیث اسٹاپ یہ تمام لوگ پبلک ٹرانسپورٹ کے ذریعے داخلی اسٹیشنوں پر اپنی گاڑیاں پارک کرنے کے بعد حرم کے مرکزی علاقے میں چلے جاتے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں

  • مطالعہ موڈ چلائیں
    100% Font Size