آخری ہنسی کی ویڈیو، "سیلفی" میں ترکیہ کی کیبل کار کے گرنے کا لمحہ محفوظ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

ترکیہ میں حکام کی جانب سے انطالیہ میں ایک کیبل کار کے ٹاور سے ٹکرانے کے نتیجے میں فضا میں پھنسے افراد کو نکالنے کی کوششیں جاری ہیں۔ اس حادثے میں ایک شخص ہلاک اور 10 زخمی ہو گئے۔ ایک ویڈیو کلپ میں ایک نوجوان عورت کے گرنے کے لمحے کو فلم بند کرلیا گیا جو اپنے دوستوں کے ساتھ کیبن میں سے ایک کے اندر تھی۔

اس ویڈیو کو نوجوان خاتون ’’سیلفی‘‘ کے انداز میں بنا رہی تھی۔ اس میں تباہی سے پہلے کے لمحات دکھائے گئے جب وہ مسکرا رہی تھی اور اپنی آخری ہنسی ہنس رہی تھی۔ یہ خوشی کے چیخوں میں بدل جانے اور سیکنڈوں میں خوف و ہراس کی کیفیت طاری کردینے سے پہلے کا منظر تھا۔ پھر تصویر ہل گئی اور پھر ویڈیو بند ہوگئی۔ لڑکی اور اس کے ساتھ رہنے والوں کی قسمت معلوم نہیں ہو سکی۔

حادثہ جمعہ کو مقامی وقت کے مطابق شام ساڑھے پانچ بجے کے قریب عید الفطر کی مصروف تعطیلات کے دوران بحیرہ روم پر انطالیہ کے پہاڑوں میں سے ایک کے اوپر پیش آیا۔

ایک بیان میں، انطالیہ کے گورنر نے اعلان کیا کہ 19 کیبنوں میں 137 افراد کو بچا لیا گیا۔ حادثے کے تازہ ترین اعداد و شمار کے مطابق 5 کیبنوں میں پھنسے 29 افراد کو بچانے کی کوششیں جاری ہیں۔ ہلاک ہونے والوں میں 54 سالہ ترک شہری اور زخمی ہونے والوں میں چھ ترک شہری اور ایک کرغیز شہری شامل ہے۔ زخمیوں میں دو بچے بھی شامل ہیں اور انہیں کوسٹ گارڈ کے ہیلی کاپٹروں کے ذریعے بچا لیا گیا۔

ترک وزیر انصاف نے واقعے کی وجوہات جاننے کے لیے تحقیقات شروع کرنے کا اعلان کیا۔ حادثے کی وجوہات کا تعین کرنے کے لیے ایک ماہر کمیٹی تشکیل دی گئی جس میں مکینیکل اور الیکٹریکل انجینئرز اور ہیلتھ اینڈ سیفٹی ماہرین شامل ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں