پانچ روزہ گلف فلم فیسٹیول ریاض میں شروع، 29 فلموں کی نمائش ہوگی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

گلف فلم فیسٹیول کے چوتھے ایڈیشن کا آغاز اتوار کو ریاض میں ہوگیا۔ پانچ دنوں کا یہ میلہ فلم سازوں اور شائقین کے لیے دلچسپی کے ڈائیلاگ سیشنز اور تربیتی ورکشاپس فراہم کر رہا ہے۔ فیسٹیول 5 دنوں تک جاری رہے گا۔ اس میں کئی زمروں میں خلیجی پروڈیوسروں کی تقریباً 29 مختلف فلموں کی نمائش کی جارہی ہے۔ ان فلموں میں فیچر فلمیں، مختصر فلمیں اور دستاویزی فلمیں شامل ہیں۔ ڈائیلاگ سیمینارز اور مختلف تربیتی ورکشاپس کا بھی انعقاد ہو رہا ہے۔ زائرین فلم انڈسٹری کو اس کے بنانے والوں اور ناقدین کے نقطہ نظر سے دیکھ کر اس کی نئی جہتیں دریافت کریں گے۔

خلیجی فلموں کے متعدد ماہرین میلے کے مہمانوں کو متعدد خصوصی تربیتی ورکشاپس کے ذریعے اپنے تجربات سے آگاہ کریں گے۔ فلمی میلے میں عبدالرحمن صندقجی کی طرف سے "ایک مؤثر دستاویزی فلم کیسے بنائی جائے؟" کے عنوان سے ورکشاپ بھی رکھی گئی ہے۔ ورکشاپ "موسیقی کمپوزر اور فلم ڈائریکٹر کا رشتہ" محمد حداد پیش کر رہے ہیں۔ "آرٹ، رائٹنگ اینڈ سکرپٹ ڈویلپمنٹ" ورکشاپ محمد حسن احمد نے پیش کی۔

میلے کے متنوع مواد کے علاوہ خلیجی فلم سازوں کی ایک بڑی تعداد میلے کے نو ایوارڈز کے لیے مقابلہ میں حصہ لے رہی ہے۔ ایوارڈز میں ان زمروں کا احاطہ کیا جاتا ہے جو فلم سازی کی دنیا کے مختلف پہلوؤں کی عکاسی کرتے ہیں۔ یہ میلہ خلیجی سینما کی 5 ممتاز شخصیات کو اعزاز سے نوازتا ہے جنہوں نے عالمی ثقافتی منظر نامے میں خلیجی ثقافت کو بلند کرنے والے معیاری کام پیش کیے ہیں۔

گلف فلم فیسٹیول فلم اتھارٹی کی کوششوں کا ہی ایک حصہ ہے۔ اس کے ذریعہ قومی اور علاقائی سطح پر ایسے تہواروں اور فورمز کے انعقاد کے ذریعے سنیما کے شعبے کو ترقی دی جارہی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں