انتہائی ضرورت مند ملکوں کو سعودی امداد 483 ارب ریال تک پہنچ گئی

مصر، یمن، پاکستان، شام اور عراق بالترتیب سب سے زیادہ امداد حاصل کرنے والے پانچ ملک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کی طرف سے "سعودی امداد" کے پلیٹ فارم پر رجسٹرڈ "انتہائی ضرورت مند ممالک" کو دی جانے والی امداد 483.75 بلین ریال یعنی لگ بھگ 129 بلین ڈالر ہوگئی ہے۔ اپنے عطیہ دہندگان کے ذریعے فراہم کی جانے والی یہ امداد بین الاقوامی سطح پر سعودی عرب کی کوششوں کو اجاگر کرتی ہے۔ یہ امداد گرانٹس کی شکل میں دی جانے والی نقدی، خیرات اور نرم قرض کی شکل میں فراہم کی جاتی ہے۔

’’سعودی ایڈ پلیٹ فارم‘‘ کے مطابق سعودی عرب کی طرف سے لاگو کیے گئے ترقیاتی اور انسانی ہمدردی کے منصوبوں کی تعداد تقریباً 6856 تک پہنچ گئی ہے۔ ان منصوبوں سے مستفید ہونے والے ملکوں کی تعداد تقریباً 169 تک ہوگئی ہے۔

سعودی امدادی پروگرام کے اعداد و شمار
سعودی امدادی پروگرام کے اعداد و شمار

اسی وقت پلیٹ فارم کے اعداد و شمار سے پتہ چلتا ہے کہ سعودی امداد سے مستفید ہونے والے ممالک میں 5 ممالک سرفہرست ہیں۔ سب سے زیادہ امداد لینے والا ملک مصر ہے۔ اس نے 32 بلین ڈالر کی امداد وصول پائی، 26 بلین ڈالر کے ساتھ یمن دوسرے نمبر پر ہے۔ تیسرے نمبر پر پاکستان ہے۔ سعودی عرب کی جانب سے انسانی اور ترقیاتی منصوبوں کے لیے پاکستان کو 12.778 ارب ڈالر فراہم کئے گئے۔ چوتھے نمبر پر شام 7.332 ارب ڈالر کے ساتھ ہے۔، پانچویں نمبر پر عراق ہے جس نے 7.330 ارب ڈالر کے لگ بھگ امداد پائی۔ چھٹے نمبر پر فلسطین نے 5.258 ارب ڈالر سے فائدہ اٹھایا ہے۔ کنگ سلمان سینٹر فار ریلیف اینڈ ہیومینٹیرین ایڈ شاہ سلمان بن عبدالعزیز کے شاہی حکم سے 2018 میں قائم کیا گیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں