سعودی عرب میں 16 سال کے فلمی سفر کی کہانی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کے علاقے الظہران میں کنگ عبدالعزیز سنٹر فار ورلڈ کلچر "اثراء" نے سعودی فلم فیسٹیول کے آغاز اور فیسٹیول کے سٹوری میوزیم کے ذریعے سعودی عرب کے 16 سالوں کے فلمی سفر کی کہانی پیش کی۔ اس حوالے سے واقعات اور کامیابیوں کا جائزہ لیا۔ 2008 میں اپنے آغاز سے لے کر اب تک کے سیشنز کی تفصیلات بتائی گئیں۔

سعودی فلم فیسٹول میں ’’ اثراء‘‘ نے سعودی فلم فیسٹیول کے آغاز اور بڑے فنکاروں کے تجربات اور مہارت کا جائزہ لیا۔ یہ وہ فنکار ہیں جنہوں نے فلم سازی میں دلچسپی رکھنے والوں کے لیے ایک امید افزا دور کی تیاری میں کردار ادا کیا اور اس دور کی باگ ڈور سنبھالی۔ اس دور میں موثر تخلیق کا عمل جاری رہا اور اس تحریک نے فنکارانہ قدر اور سنیما منظر کو بھرپور بنایا۔

2008 میں فلم فیسٹول کے پہلے سیشن سے لے کر 2024 میں دسویں سیشن تک فلمی مقابلوں میں اندراجات کی کل تعداد کا بتایا گیا۔ ان مقابلوں میں 1444 فلمیں پیش کی گئیں۔ مقابلہ 2,162 منظرناموں تک پہنچ گیا۔ پروڈکشن مارکیٹ نے 289 پروجیکٹس پیش کئے۔ ایوارڈز کی تعداد 155 ایوارڈز تک پہنچ گئی۔

فیسٹول کے آغاز سے لے کر 2023 کے نویں سیشن تک فیسٹول میں آنے والے زائرین کی تعداد ایک لاکھ 65 ہزار 631 تک رہی۔ فیچر فلم مقابلہ، دستاویزی فلمیں، سکرین پلے، مختصر افسانہ فلمیں، طلبہ کی فلمیں، سکرین پلے اور دوسرے مقابلے رکھے گئے۔ میلے کے خصوصی انعامات بھی دئیے گئے۔

سعودی فلم فیسٹول کے میوزیم کو دیگر شخصیات کے ساتھ فن کے مستند فنکاروں سے سجایا گیا۔ یہ وہ فنکار ہیں جنہوں نے تھیٹر اور سنیما کے شعبوں میں ایک مضبوط تاثر چھوڑا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں