ایرانی صدر کی ہیلی کاپٹر حادثے میں رحلت پر عالمی رہنماؤں کا اظہار تعزیت

دنیا بھر کے مختلف ممالک نے ایرانی صدر ابراہیم رئیسی کی ہیلی کاپٹر حادثے میں موت پر اظہار افسوس کرتے ہوئے ایران سے تعزیت کی ہے۔

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

دنیا بھر کے مختلف ملکوں کے رہنماؤں کی جانب سے ایرانی صدر ابراہیم رئیسی کی ہیلی کاپٹر حادثے میں اپنی حکومت میں شامل قریبی اور اعلیٰ قیادت کے ہمراہ رحلت پر اظہار افسوس اور تعزیتی پیغامات کا سلسلہ جاری ہے۔

چینی صدر شی جن پنگ نے ایرانی صدر کی موت کو ایرانی عوام کے لیے بڑا نقصان قرار دیا ہے۔ جبکہ روسی وزیر خارجہ سرگے لاوروف نے انہیں ’روس کا سچا دوست‘ قرار دیا ہے جبکہ لبنان میں تین روزہ سوگ کا اعلان کیا گیا ہے۔

فلسطین تحریک حماس کی جانب سے جاری کردہ بیان میں ایران کے سپریم لیڈر علی خامنہ ای، ایرانی حکومت اور ایرانی عوام کے ساتھ ’’اس بے پناہ نقصان‘‘ پر گہری تعزیت اور یکجہتی کا اظہار کیا گیا ہے، حماس نے فلسطین کی حمایت اور اسرائیل کے خلاف مزاحمت کی کرنے پر ایرانی رہنماؤں کی تعریف کی اور اس اعتماد کا اظہار کیا۔

عراق کے وزیر اعظم محمد شیاع السودانی نے ایک بیان میں کہا کہ ’انتہائی دکھ اور افسوس کے ساتھ، ہمیں اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر ابراہیم رئیسی اور وزیر خارجہ حسین امیر عبداللہیان کی اپنے ساتھیوں کے ہمراہ شمالی ایران میں ہیلی کاپٹر حادثے میں انتقال کی خبر ملی ہے۔‘ عراقی وزیر اعظم کا مزید کہنا تھا کہ ’ہم دعا گو ہیں کہ خدا ان کی مغفرت فرمائے، اور ان کے اہل خانہ اور پیاروں کو صبر عطا کرے۔‘

ادھر بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی نے بھی ایران کے صدر کی موت پر گہرے دکھ کا اظہار کر دیا، سماجی رابطے کی ویب سائٹ ایکس پر جاری بیان میں ان کا کہنا تھا کہ اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر ڈاکٹر سید ابراہیم رئیسی کے المناک انتقال پر میں گہرے دکھ اور صدمے میں ہیں، بھارت-ایران باہمی تعلقات کو مضبوط بنانے میں ان کے تعاون کو ہمیشہ یاد رکھا جائے گا، ان کے اہل خانہ اور ایرانی عوام کے ساتھ میری دلی تعزیت ہے، بھارت دکھ کی اس گھڑی میں ایران کے ساتھ کھڑا ہے۔

پاکستان کے دورے پر آئے ہوئے ترکیہ کے وزیر خارجہ نے اسلام آباد میں نیوز کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے ’’کہ ایرانی صدر اور وزیر خارجہ کے انتقال سے ہمیں شدید دکھ ہوا، ہم دکھ کی اس گھڑی میں ایرانی عوام کے ساتھ اظہار تعزیت کرتے ہیں۔‘‘ ان کا کہنا تھا کہ جب ہم نے حادثے کے بارے میں سنا تو ایرانی حکام سے رابطہ کیا، ہماری وزارت دفاع اور ایمرجنسی اتھارٹیز نے پوری کوشش کی لیکن بدقسمتی سے ہمیں اچھی خبر موصول نہیں ہوئی، خالق حقیقی صدر، ایرانی وزیر خارجہ اور دیگر جاں بحق ہونے والوں کی روح کو سکون دے۔

وینزویلا کے صدر نکولس مادورو نے بھی ایرانی صدر ابراہیم رئیسی کی شہادت پر شدید اظہار افسوس کر دیا، ان کا کہنا تھا کہ ہمارے اور ایرانی صدر کے درمیان دیرینہ تعلقات تھے۔ اس کے علاوہ تھائی لینڈ کے وزیرِ اعظم، عراق کے وزیرِ اعظم، مالدیپ کے وزیرِ خارجہ سمیت دیگر ممالک کی اعلیٰ شخصیات نے بھی بیان جاری کیے ہیں۔

یورپی یونین، متحدہ عرب امارات، قطر، شام، ملائیشیا، سپین اور لبنان کی قیادت نے بھی ایرانی صدر اور ان کے قریبی رفقاء کی ہیلی کاپٹر حادثے میں موت پر اظہار افسوس کیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں