"اسے زنگ لگنے دو" الجزائر میں اسرائیلی مصنوعات کے خلاف نئی مہم

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

گزشتہ چند دنوں کے دوران الجزائر کے لوگوں نے جرائم کی مذمت کے اظہار کے طور پر اسرائیل کی حمایت کرنے والی مصنوعات یا برانڈز کے بائیکاٹ کی نئی مہم سوشل میڈیا پر شروع کردی ہے۔ اس مہم میں خاص طور پر پیپسی اور کوکا کولا سمیت سافٹ ڈرنکس کے خلاف مہم میں ’’ اسے زنگ لگنے دو‘‘ کا نعرہ استعمال کیا ہے۔

سرگرم کارکنوں، سول سوسائٹی کی تنظیموں اور شہریوں نے کسی بھی اسرائیلی پروڈکٹ یا تل ابیب کو سپورٹ کرنے والی مصنوعات کی خریداری کو مکمل طور پر بند کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔ جن برانڈز کے خلاف مہم چلائی گئی ان میں سے بہت سے برانڈز نے واضح طور پر غزہ پر اسرائیلی جنگ کی حمایت کا اعلان کیا ہے۔

اسے زنگ لگنے دو

’’ اسے زنگ لگنے دو‘‘ کا نعرہ بائیکاٹ کی کالوں کی تجدید کے طور پر سامنے آیا۔ بائیکاٹ کی مہم پہلے سے شروع کی گئی تھیں اور فلسطینیوں کے خلاف ہر حملے کے ساتھ شروع کی جاتی ہیں۔

کارکنوں نے نعرہ لگایا "اسے زنگ لگنے دو‘‘ ۔ یہ نعرہ ان مصنوعات کو تب تک شیلف پر چھوڑنے کی ضرورت کی نشاندہی کرتا ہے جب تک کہ وہ تباہ نہ ہو جائیں۔ کارکنوں نے اس مہم کو مسلسل جاری رکھنے کی ضرورت پر بھی زور دیا اور کہا کہ کبھی کبھار کا بائیکاٹ کافی نہیں ہے۔ اپنے مقصد کے حصول کے لیے طویل عرصہ تک بائیکاٹ سے ہی اسرائیلی معیشت کو نقصان پہنچایا جاسکتا ہے۔

فلسطین کے حامی افراد نے کہا بائیکاٹ میں وہ تمام لوگ شامل ہیں جو اسرائیل کے ساتھ تعاون کر رہے ہیں یا اس سے یکجہتی کر رہے ہیں۔ خاص طور پر چونکہ فلسطینیوں کے پاس اپنا دفاع کرنے کے لیے کچھ نہیں ہے اس لیے بھی بائیکاٹ کے ذریعے اسرائیل کو جتنا ممکن ہو نقصان پہنچانے کی ضرورت ہے۔

بہت سے کارکنوں نے اس مہم کو دوسرے ممالک کو شامل کرنے کے لیے وسعت دینے کا مطالبہ کیا۔ یاد رہے الجزائر میں بہت سی مشہور اسرائیلی اشیا فروخت کی جاتی ہیں۔ ان میں خاص طور پر صارفین کی اشیاء جیسے سافٹ ڈرنکس، مٹھائیاں، اور کاسمیٹکس شامل ہیں۔ اسی طرح کچھ وہ بین الاقوامی ریسٹورینٹس بھی بائیکاٹ مہم کا نشانہ ہیں جنہوں نے عوامی طور پر اسرائیل کے لیے اپنی حمایت کا اظہار کیا تھا۔

چند ہفتے قبل الجزائر کے شہریوں نے اسرائیل کے ساتھ ہمدردی رکھنے والی یا غزہ کے خلاف جرائم کی مذمت نہ کرنے والی مشہور امریکی شخصیات کے صفحات کو بلاک کرنے کی مہم میں بھی حصہ لیا تھا۔ الجزائر میں کے ایف سی ریسٹورنٹ کھولنے کے خلاف ایک احتجاجی مظاہرہ بھی کیا گیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں