.

سعودی عرب:ساڑھے 5 لاکھ سے زیادہ حج درخواستیں وصول،آن لائن رجسٹریشن مکمل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کی وزارتِ حج وعمرہ نے اس سال فریضہ حج ادا کرنے والے افراد کی آن لائن رجسٹریشن کا عمل ختم کرنے کا اعلان کیا ہے اور بتایا ہے کہ اس مرتبہ 558270 افراد نے حج کے لیے درخواستیں وزارت کے پورٹل پرجمع کرائی ہیں اوراب ان کی جانچ کی جائے گی۔

وزارت نے جمعرات کو ایک بیان میں کہا ہے کہ حج کے لیے رجسٹریشن کے دوسرے مرحلے کا جمعہ 25 جون سے آغاز ہوگا۔اس نے بتایا ہے کہ حج کے تمام درخواست گزاروں میں 59 فی صد مردحضرات اور 41 فی صد خواتین ہیں۔

ان میں تین فی صد درخواست گزاروں کی عمریں 20 سال سے کم ہیں،26 فی صد 21 سے 30 سال کے درمیان عمر کے گروپ سے تعلق رکھتے ہیں،38 فی صد 31 سے 40 سال کی عمر کے ہیں۔

وزارتِ حج وعمرہ نے آن لائن ڈیٹا کی بنیادپر بتایا ہے کہ 20 فی صد درخواست گزار 41 سے 50 سال کی عمر کے گروپ سے تعلق رکھتے ہیں۔11 فی صد 51سے 60 سال اور صرف دوفی صد 60 سال سے زیادہ عمر کے ہیں۔

وزارت حج وعمرہ نے اسی ماہ کروناوائرس کی وَبا کے پیش نظراس مرتبہ بھی صرف سعودی عرب میں مقیم 60 ہزار شہریوں اور مکینوں کو حج کی اجازت دینے کا اعلان کیا تھا اور کہا تھا کہ’’دنیا بھر کو کرونا وائرس کی وبا اور اس کی نئی شکلوں کے ظہورکے بعد جس طرح کے حالات کا سامنا ہے،اس کے پیش نظرحج کا اندراج صرف سعودی عرب میں مقیم شہریوں اور مکینوں ہی تک محدود ہوگا۔‘‘

وزارت نے وضاحت کی تھی کہ 18 سے 65 سال کی عمر تک مکمل ویکسین لگوانے والے افراد یا جنھوں نے آن لائن اندراج سے کم سے کم 14 روز پہلے ویکسین کا ایک انجیکشن لگوا لیا ہے یا جو افراد ویکسین کی دونوں خوراکیں لگواچکے ہیں اور کووِڈ-19 کاشکار ہونے کے بعد تن درست ہوچکے ہیں،انھیں حج کے لیے اپنے ناموں کے اندراج کی اجازت ہوگی۔توقع ہے کہ اس مرتبہ حج سیزن کا آغاز وسط جولائی سے ہوگا۔